نئے پاکستان میں پرانا نظام اب نہیں چل سکتا،وزیراعظم عمران خان

نئے پاکستان میں پرانا نظام اب نہیں چل سکتا،وزیراعظم عمران خان
نئے پاکستان میں پرانا نظام اب نہیں چل سکتا،وزیراعظم عمران خان

  



لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ معاشی ترقی کےلئے قابل بیوروکریسی کا بہت اہم کردار ہے،پنجاب میں امن وامان اور گورننس کے نظام میں بہتری لانے کی ضرورت ہے،ہم نے نئے پاکستان میں پرانے مائنڈ سیٹ کو تبدیل کرنا ہے،پرانا نظام اب نہیں چل سکتا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت صوبائی بیوروکریسی اور پولیس کے سینئرافسران کا اجلاس ہوا،وزیراعلیٰ پنجاب،چیف سیکرٹری،آئی جی پنجاب،فردوس عاشق اعوان،زلفی بخاری اورشہزاداکبربھی شریک ہوئے۔وزیراعظم عمران خان نے نئی تعیناتیوں پرافسران کو مبارکباد دی،اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہاکہ 60کی دہائی میں گورننس،بیوروکریسی اور پالیسیوں کی مثالیں دی جاتی تھیں،پاکستان نازک دورسے گزررہا ہے جس کیلئے معاشی استحکام کی ضرورت ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ معیشت مستحکم ہورہی ہے،معاشی ٹیم کومبارکباددیتاہوں،انہوں نے کہا کہ بیوروکریسی اوردیگرعہدوں پرتعیناتیاں میرٹ پرکیں،ہم نے افسران کو ہر قسم کے سیاسی دباؤ سے آزاد کیا ہے،سب کام میرٹ پر کرنے ہیں ،افسران نے کسی سیاسی شخصیت کا کوئی بھی ناجائز کام ہر گز نہیں کرنا۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ معاشی ترقی کےلئے قابل بیوروکریسی کا بہت اہم کردار ہے،پنجاب میں امن وامان اور گورننس کے نظام میں بہتری لانے کی ضرورت ہے،ہم نے نئے پاکستان میں پرانے مائنڈ سیٹ کو تبدیل کرنا ہے،پرانا نظام اب نہیں چل سکتا،افسران کی مدت ملازمت کو تحفظ فراہم کریں گے۔

عمران خان نے کہاکہ غریب آدمی کی زندگی میں بہتری لانے کےلئے کوشش کریں گے،افسران بچوں کے خلاف جرائم کی روک تھام پر خصوص توجہ دیں ،افسر کا کام کمزور کو طاقتور کے خلاف تحفظ فراہم کرنا ہے، پہلے تھانوں میں طاقتور کو تحفظ فراہم کیا جاتا تھا،اب آپ کی ذمہ داری ہے کہ غریب کو طاقتور کے خلاف تحفظ فراہم کریں ،طاقت عوام کی خدمت اور ان کی زندگیوں میں بہتری لانے کیلئے استعمال کی جائے ۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /پنجاب /لاہور