احسن اقبال نے حکومت کے خلاف بغاوت کا مقدمہ درج کرنے کا مطالبہ کردیا

احسن اقبال نے حکومت کے خلاف بغاوت کا مقدمہ درج کرنے کا مطالبہ کردیا
احسن اقبال نے حکومت کے خلاف بغاوت کا مقدمہ درج کرنے کا مطالبہ کردیا
سورس: File

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما احسن اقبال نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن کو فنڈز نہ جاری کرنے پر حکومت کیخلاف آئین سے بغاوت کا مقدمہ درج ہونا چاہیے ، فنڈز سے انکار کرنا  درحقیقت الیکشن کمیشن کے آئینی فرائض میں مداخلت ہے ۔ 

 نجی ٹی وی 24 نیوز کے پروگرام دستک میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت کی جان  الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) میں پھنسی ہے اور وہ الیکٹرانک دھاندلی کے ذریعے جیت کے خواب دیکھ رہی ہے ۔

چیئرمین پیپلز پارٹی   بلاول بھٹو زرداری کے بیانات پر تبصرہ کرتے ہوئے احسن اقبال کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کو ایک دوسرے کیخلاف بیان بازی کی بجائے حکومت کیخلاف سینہ سپر ہونا چاہیے ۔ پروگرام کے دوران اینکر ریحان طارق نے جب ان سے گلگت بلتستان کے سابق چیف جج رانا شمیم کے اسلام آباد ہائیکورٹ میں دیے گئے بیان کے حوالے سے سوال پوچھا تو انہوں نے اس پر تبصرہ کرنے سے انکار کردیا۔

واضح رہےکہ وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا تھا کہ قانون میں تبدیلی کے بعد ہم سمجھتے ہیں کہ الیکشن کمیشن کے لیے اگلے تمام ضمنی الیکشن اور عام انتخابات  الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر کرانا لازمی ہیں اور اگر الیکشن الیکٹرانک ووٹنگ مشین پر نہیں ہوتے تو حکومت الیکشن کمیشن کو فنڈ نہیں کر سکے گی کیونکہ قانون صرف ای وی ایم پر انتخابات کو مانتا ہے،وزیر قانون کا بھی یہی ماننا ہے کہ بادی النظر میں حکومت الیکشن کمیشن کو انتخابات کے لیے تب ہی فنڈ دے سکے گی جب وہ الیکشن ای وی ایم پر ہوں گے لہٰذا ہم نے ایک کمیٹی بنائی ہے اور اب سے حکومت انہی انتخابات کو فنڈ کر سکے گی جو الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے ذریعے منعقد ہوں گے۔

مزید :

قومی -