کنزیومر کورٹ کے جج اور ضلعی انتظامیہ  کے درمیان تنازعہ نیا رخ اختیار کرگیا،ڈی پی او سمیت اعلی افسران کے تبادلے ،مقدمہ بھی درج

کنزیومر کورٹ کے جج اور ضلعی انتظامیہ  کے درمیان تنازعہ نیا رخ اختیار ...
کنزیومر کورٹ کے جج اور ضلعی انتظامیہ  کے درمیان تنازعہ نیا رخ اختیار کرگیا،ڈی پی او سمیت اعلی افسران کے تبادلے ،مقدمہ بھی درج

  

منڈی بہاوالدین(ڈیلی پاکستان آن لائن) کنزیومر کورٹ کے جج کی جانب سے ڈی سی او اور اے سی کے خلاف کارروائی کے حکم کے بعد معاملہ نیا رخ اختیار کر گیا ہے۔

ڈی سی  او اور اے سی منڈی بہاوالدین کی ضمانت کے بعد آج وکلا رہنما کنزیومر کورٹ کے جج راؤ عبدالجبار کے پاس پہنچے اور انہیں صدر بار کے خلاف توہین عدالت کا نوٹس واپس لینےکا کہا،جس کے بعد وکلا نے عدالت میں ہنگامہ شروع کردیا اور جج راؤ عبدالجبار کو تشدد کا نشانہ بھی بنایا اس دوران وکلا کی جانب سے گالم گلوچ بھی کیا گیا۔

دوسری جانب سے آئی جی پنجاب نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ڈی پی او منڈی بہاوالدین ساجد حسین کھوکھر کو او ایس ڈی بنادیا اور انہیں سینٹرل پولیس آفس رپورٹ کرنے کا حکم دیا ہے جبکہ دوسری جانب ڈی سی اومنڈی بہاوالدین طارق بسرا اور اے سی منڈی بہاوالدین کا بھی تبادلہ کردیا گیا ہے۔تشدد کے واقعہ کے بعد جج راؤ عبدالجبار پولیس سٹیشن  پہنچے جہاں انہوں نے ڈی سی او طارق بسرا،اے سی منڈی امتیاز بیگ،صدر بار زاہد یار گوندل،سیکرٹری بار یاسر شاہ اور دیگر وکلا پر اپنی مدعیت میں دہشتگردی  سمیت دیگر دفعات کے تحت مقدمہ درج کروادیا۔

واضح رہے کہ یہ معاملے کچھ عرصہ قبل ایک پلاٹ کی الاٹمنٹ سے شروع ہوا تھا۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -منڈی بہائو الدین -