تحریک انتفاضہ القدس کے 28روز، 65فلسطینی شہید، 11یہودی جہنم واصل ہو گئے

تحریک انتفاضہ القدس کے 28روز، 65فلسطینی شہید، 11یہودی جہنم واصل ہو گئے

  

رام اللہ (این این آئی) فلسطین میں تحریک انتفاضہ کے 28 ایام میں اب تک اسرائیلی دہشت گردی میں شہید ہونیوالے فلسطینیوں کی تعداد 65 ہوگئی ہے جبکہ فلسطینیوں کی مزاحمتی کارروائیوں میں 11 صہیونی بھی ہلاک ہوگئے ہیں۔القدس سٹڈی سنٹر کی جانب سے جاری رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اکتوبر کے شروع سے 28 اکتوبر بروز بدھ تک اسرائیلی فوج کی ریاستی دہشت گردی میں 65 فلسطینی شہید ہوئے ہیں۔ گزشتہ روز تل الرمیدہ کے مقام پر اسرائیلی فوج کی دہشت گردی میں الخلیل شہر میں تل رمیدہ کے مقام پر ایک 23 سالہ فلسطینی اسلام رفیق عبیدو جام شہادت نوش کرگیا جس کے بعد شہداء کی تعداد 65 ہوگئی ہے۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ تحریک انتفاضہ کے دوران سب سے زیادہ قریابانیاں 27 ایام میں 22 فلسطینیوں کی جانب سے دی گئی ہیں جہاں ہر 30 گھنٹے کے بعد ایک فلسطینی شہری کو شہید کیا جاتا رہا ہے۔بیت المقدس کے بعد غزہ کی پٹی شہداء تحریک انتفاضہ کے حوالے سے دوسرے نمبر پرہے جہاں سے 17 فلسطینیوں کو شہید کیا گیا۔صہیونی فوج کی

وحشیانہ جارحیت اور طاقت کے استعمال سے 7 ہزار 574 فلسطینی زخمی ہوئے ہیں۔ ان میں 660 فلسطینی براہ راست فائرنگ سے زخمی ہوئے۔ 2699 کو دھاتی گولیوں سے نشانہ بنایا گیا۔گزشتہ 28ایام میں اسرائیلی فوج کے کریک ڈاؤن میں 1240 فلسطینیوں کو حراست میں لیا گیا۔

ان میں 422 وہ فلسطینی مزدور بھی شامل ہیں جنہیں 1948 ء کے مقبوضہ فلسطینی شہروں سے کام کے دوران پکڑا گیا۔فلسطینیوں کی جوابی مزاحمتی کارروائیوں میں 11 صہیونی جہنم واصل ہوئے اور 244 زخمی ہوئے ہیں جن میں سے 17 کی حالت خطرے میں بیان کی جاتی ہے۔

مزید :

عالمی منظر -