تحصیل کونسل نوشہرہ کا 17 کروڑ روپے کا ٹیکس فری بجٹ منظور

تحصیل کونسل نوشہرہ کا 17 کروڑ روپے کا ٹیکس فری بجٹ منظور

  

نوشہرہ(بیورورپورٹ) تحصیل کونسل نوشہرہ نے سال 15,16کیلئے 17کروڑ 15لاکھ ایک ہزار کا ٹیکس فری بجٹ کی منظوری دے دی غیرترقیاتی اخراجات کیلئے گیارہ کروڑ 61لاکھ تیس ہزار تین سو بیالیس تحصیل کونسل کا امدن 13کروڑ 99لاکھ 45ہزار 530ہے جبکہ اخراجات 17کروڑ 15لاکھ ایک ہزار ہے بجٹ کا خسارہ پورا کرنے کیلئے تحصیل کونسل ٹی ایم اے کے زمینوں پر پلازے، دکانیں تعمیر کریں گے جبکہ دیگر ذرائع سے بھی امدن حاصل کریں گے ترقیاتی سکیموں کیلئے 1کروڑ 24لاکھ 55ہزار روپے مختص کئے ہیں تفصیلات کے مطابق تحصیل کونسل کا بجٹ اجلاس زیرصدارت تحصیل نائب ناظم زرعالم خان منعقد ہوا بجٹ اجلاس میں تحصیل کونسل کے ناظم رضا اﷲ خان نے بجٹ پیش کرتے ہوئے خاص خاص نکات پیش کئے جن میں بجٹ خسارہ تین کروڑ بیس لاکھ پانچ ہزار چار سو بہتر لیکن تحصیل کونسل کے دیگر ذرائع سے امدن حاصل کرکے خسارہ پورا کیاجائے گا ترقیاتی سکیموں کیلئے ایک کروڑ چوبیس لاکھ پچپن ہزار مختص کئے ہیں جو تحصیل کونسل کے علاقوں میں سڑکوں، گلیوں، نالیوں آب نوشی اور دیگر ترقیاتی کاموں پر خرچ کریں گے تحصیل کونسل نوشہرہ نے دستکاری سنٹرز میں سلائی مشینوں اور اساتذہ کے تنخواہوں کیلئے خواتین ویلفےئر پروگرام کے مد میں سات لاکھ اکیاسی ہزار آٹھ سوبارہ روپے مختص ہے علاقے کی صفائی ایک ترقیاتی عمل ہے مشینری کی مرمت کیلئے مبلغ دو لاکھ روپے مختص ہے آبنوشی سکیموں کے بجلی کی مد میں مبلغ سات لاکھ اور مزید بہتری کیلئے آٹھ لاکھ روپے مختص کئے ہیں دیگر اخراجات کی مد میں آٹھ لاکھ روپے مختص کئے ہیں تحصیل کونسل کے ممبران امجد اعظم عرف قائداعظم، احد خٹک، ڈاکٹر گوہر علی، حاجی بشیرخان، عنایت الرحمان، احسان وزیر، عبدالغفار، شاہ سعود، فواد خان، ممتاز، عالمگیر، زاہد خان، اسماعیل، فضل مولا ، محمد اقبال، عمران اﷲ حقانی، قاری سلیمان، اقلیتی کونسلرز اوم پرکاش دیگر کونسلرز کے علاوہ لیڈی کونسلرز نے بجٹ نے تفصیلی بحث کی اور مختلف تجاویز پیش کئے تحصیل کونسل کے ناظم رضا اﷲ خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تحصیل کونسل کو ایک ٹیم ورک کی طرح چلائیں گے ممبران کے مسائل کے حل کیلئے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے نیا نظام ہے اس کی بہتری پر کچھ وقت لگے گا ممبران اس سلسلے میں تعاون کرے تاکہ عوام کے بنیادی مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل ہوسکے تحصیل کونسل نے متفقہ طورپر ڈیوٹی سے مسلسل غیرحاضر سرکاری ملازمین کو فوری طورپر برطرف کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -