بٹ خیلہ ہسپتال کی ادویات خریداری میں گھپلوں کی تحقیقات

بٹ خیلہ ہسپتال کی ادویات خریداری میں گھپلوں کی تحقیقات

  

بٹ خیلہ (بیورورپورٹ)ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرہسپتال بٹ خیلہ میں کروڑوں روپے کی خریدگئی ادویات میں وسیع پیمانے پرکرپشن کے تحقیقات شروع دس سالوں سے زیادہ عرصہ گزارنے والے ڈاکٹروں کوتبدیل کرکے قبضہ مافیاں کوختم کیاجائے عوامی حلقوں کامطالبہ۔تفصیلات کے مطابق موجودہ حکومت نے عوام کوفوری طبی سہولیات کی فراہمی کیلئے ماہ اپریل میں 3کروڑ60لاکھ روپے ایمرجنسی ادویات کیلئے فراہم کی گئی ہے مگرساتھ ماہ گزرنے کے بعد نہ توپہلے صحیح معنوں میں عوام کوادویات دی گئی ہے اورنہ اب دی جارہی ہے انتہائی باوثوق ذرائع سے معلوم ہواہے مذکورہ فنڈزمیں وسیع پیمانے پرخردبردہوچکاہے اوراس سلسلے میں انکوائر بھی مقررہوئی ہے جوبہت جلدرپورٹ تیارکرکے اعلیٰ حکام کوبجھوادی جائیگی دریں اثناء عوامی حلقوں نے مطالبہ کیاہے کہ حکومت بٹ خیلہ ہسپتال میں دس سالوں سے زیادہ عرصہ گزارنے والے ڈاکٹروں کوفوری طورپریہاں سے تبدیل کرکے قبضہ مافیا کاراج ختم کیاجائے جس سے عوام سکھ کانس لیں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -