تعلیمی اخراجات کی مد میں وظائف کے سلسلے کو مزید وسعت دی جائیگی

تعلیمی اخراجات کی مد میں وظائف کے سلسلے کو مزید وسعت دی جائیگی

  

 پشاور( پاکستان نیوز)خیبرمیڈیکل یونیورسٹی(کے ایم یو) پشاور کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمد حفیظ اللہ نے کہاہے کہ یونیورسٹی کے طلباء وطالبات کے ساتھ ان کی تعلیمی اخراجات کی مد میں وظائف کے سلسلے کو مزید وسعت دی جائے گی۔ مستقبل میں ہونہار اورنادار طلباء وطالبات کی حوصلہ افزائی کے لئے نہ صرف وظائف کی مالیت میں اضافہ کیاجائے گا بلکہ طلباء وطالبات کی تعدادمیں بھی میرٹ کے مطابق اضافہ کیاجائے گا۔ وہ یونیورسٹی کے زیر اہتمام پاک یوایس ایڈ میرٹ سکالر شپ، ایچ ای سی میرٹ سکالرشپ اورکے ایم یو کے نادار طلباء کو مالی امداد کی سکیموں کے تحت مختلف انسٹی ٹیوٹس کے طلباء وطالبات میں چیکوں کی تقسیم کی تقریب سے بطورمہمان خصوصی خطاب کررہے تھے۔ ا س موقع پر یونیورسٹی کے رجسٹرار ڈاکٹر فضل محمود، ڈائریکٹر اکیڈیمکس ڈاکٹر جمیل احمد، ڈائریکٹرانسٹی ٹیوٹ آف بیسک میڈیکل سائنسز( آئی بی ایم ایس) پروفیسر ڈاکٹر جواد احمد، ڈائریکٹر انسٹی ٹیوٹ آف فزیکل میڈیسن اینڈ ری ہیبی لیٹیشن(آئی پی ایم آر) محمد بن افسر جان، ڈائریکٹرانسٹیی ٹیوٹ آف پیرامیڈیکس( آئی پی ایم ایس) کرنل (ریٹائرڈ) ڈاکٹر جاوید خان، ڈائریکٹر انسٹی ٹیوٹ آف پبلک ہیلتھ اینڈ سوشل سائنسز(آئی پی ایچ اینڈ ایس ایس)ڈاکٹر ایاز ایوب اورکورآرڈینیٹرانسٹی ٹیوٹ آف نرسنگ سائنسز( آئی این ایس) نسرین غنی بھی موجود تھے۔پروفیسر ڈاکٹرمحمد حفیظ اللہ نے کہا کہ پاکستان کاشمار ان چند خوش قسمت ممالک میں ہوتاہے جہاں بچوں کے تعلیمی اخراجات حکومت اوروالدین مل کر اٹھاتے ہیں جبکہ ترقی یافتہ ممالک میں تمام تعلیمی اخراجات طلباء وطالبات کوخود اٹھانے پڑتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کے ایم یو کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ یہاں اگر ایک جانب تمام داخلے بغیر کسی تفریق اور استثناء اور سفارش کے میرٹ پردیئے جاتے ہیں وہاں میرٹ پر آنے والے نادار اور غریب طلباء وطالبات کے تعلیمی اخراجات کے لئے مختلف ذرائع سے وظائف بھی فراہم کئے جاتے ہیں۔ پروفیسرحفیظ اللہ نے کہاکہ وظائف کوتعداد اور مالیت کے لحاظ سے مزید وسعت دینے کے لئے تمام ضروری وسائل اور اقدامات بروئے کار لائے جائیں گے۔ انہوں نے متعلقہ اداروں کے سربراہان کو ہدایت کی کہ مستحق طلباء وطالبات کے تعلیمی اخراجات اٹھانے کے لئے وظائف کی موجودہ سکیموں کے ساتھ ساتھ نئی راہیں اور مواقع تلاش کرنے پر بھی کام کرناچاہیے۔ آخر میں انہوں نے کے ایم یو کے انسٹی ٹیوٹس آئی این ایس،آئی پی ایم آر، آئی پی ایم ایس، کمز،آئی پی ایچ اینڈ ایس ایس اور آئی بی ایم ایس کے مختلف شعبوں اورکلاسوں کے137طلباء وطالبات میں مجموعی طورپر54لاکھ15ہزاردوسو پچاس مالیت کے چیک تقسیم کئے#

مزید :

پشاورصفحہ آخر -