پاکستان تنزانیہ کا مشترکہ فرٹیلائزر کمپلیکس کے قیام وتشکیل کا معاہدہ

پاکستان تنزانیہ کا مشترکہ فرٹیلائزر کمپلیکس کے قیام وتشکیل کا معاہدہ

  

اسلام آباد(نمائندہ خصوصی)پاکستان میں فرٹیلائز کے شعبہ میں سرکردہ اور رہنما ادارے ایف ایف سی نے تنزانیہ میں ایک بڑے فرٹیلائزر کمپلیکس کے مشترکہ قیام و تشکیل کیلئے ایک معاہدہ کیا ہے۔اس مذکورہ پراجیکٹ پر پیش رفت کرتے ہوئے ایف ایف سی نے ڈیمارک کے ٹیکنالوجی فراہم کرنے والے مشہور و معروف ادارے(Haldor Topsoe) ہالڈر ٹاپسوA/S(HT) اور جرمنی کے معروف پراجیکٹ ڈیویلپر فیرسٹال انڈسڑیل پراجیکٹس gmbh(FIP) کی بطور کانسرٹیم شراکت سے تنزانیہ کی سرکاری ایجنسی تنزانیہ پٹرولیم ڈیویلپمنٹ کارپوریشن (ٹی پی ڈی سی) سے معاہدہ کیا ہے۔مجوزہ پلانٹ دارالا سلام کے جنوب میں لنڈی مت وارا کے علاقہ میں لگایا جا رہا ہے جہاں پر بندرگاہ کی سہلوت اور قدرتی گیس بھی دستیاب ہے۔یہ منصوبہ تنزانیہ کے غیرملکی سرمایہ کارے کے بڑے منصوبوں میں سے ایک ہے۔شنید ہے کہ مزکورہ پراجیکٹ 2020تک منظرِ عام پر آجائے گااور مقامی اور بین الاقوامی مارکیٹ کے لئے اس کے یوریا کی پیداواری صلاحیت 1.3ملین ٹن فی سال ہوگی۔ایف ایف سی مہارت اور تجربہ سے تنزانیہ کا زرعی شعبہ سے سب سے زیادہ مستفیذ ہوگا۔امونیا اور یوریا کے بڑے پلانٹس چلانے کے تین دہائیوں پر محیط اپنے تجربہ اور جدید ترین مہارتوں سے لیس فوجی فرٹیلائزر کمپنی تنزانیہ کی افرادی قوت کی تربیت اور دیگر متعلقہ امور چلانے کیلئے ہمہ وقت مستعد اور موزوں ترین ادارہ ہے۔تنزانیہ کے معاشی و معاشرتی مفادات کے پیشِ نظر تنزانیہ پٹرولیم ڈیویلپمنٹ کارپوریشن (ٹی پی ڈی سی) نے اس پیش رفت کو سراہتے ہوئے اسے ملک کی ترقی کیلئے نہایت اہم قرار دیا ہے۔مجوزہ منصوبہ نہ صرف روزگار کے براہِ راست مواقع پیدا کرے گا بلکہ متعلقہ صنعتوں کو پروان چڑھانے میں بھی ممدو معاون ثابت ہوگا۔ماہرین کے اعداوشمار کے مطابق اس منصوبہ کی تعمیر اور فعالیت سے تنزانیہ اور پاکستان کے تقریبا 5,000/-لوگوں کو براہِ راست یا بلواسطہ طور پر روزگار کے نئے موقع میسر آسکیں گے۔لیفٹیننٹ جنرل شفقات احمد (ریٹائرڈ) نے بورڈ آف ڈائریکٹرز کو اس منصوبے کی غرض وغائت سے آگاہ کرتے ہوئے اسے ایف ایف سی کی عالمی مہم کا ایک اہم منصوبہ اور سرچشمہ قرار دیا ہے۔ملکی اقتصادیات پر نظر رکھنے والے ماہرین نے اس منصوبہ کو ملک میں زرِ مبادلہ لانے اور افریقی ریجن میں اچھی ساکھ بنانے کیلئے اہم پیش رفت قرار دیاہے۔یہ سرمایہ کاری ایف ایف سی کے ا س جذبہ کی عکاس ہے کہ کمپنی کی استعداد کار بڑھانے اور نئی کاروباری جہتوں کی کھوج کو بروئے کار لاکراپنے شئیر ہولڈرزان کے اعتماد کا بھرپور اور پائیدارصلہ بشکل نفع دیا جائے جو کہ 97%کی شرح سے پاکستان میں سب سے زیادہ ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -