وزیر داخلہ سے ایرانی سپریم نیشنل سیکورٹی کونسل کے سیکرٹری علی شمخانی کی ملاقات

وزیر داخلہ سے ایرانی سپریم نیشنل سیکورٹی کونسل کے سیکرٹری علی شمخانی کی ...

  

اسلام آباد (نمائندہ خصوصی) وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ پاکستان اور ایران کو اسٹریٹجک ہمسایوں اور بھائیوں کی حیثیت سے نہ صرف باہمی معاملات کو طے کرنے اور قریبی معاون باہمی روابط کو فروغ دینے بلکہ حکومتی سطح سے ماورا اور عوام کی سطح پر استوار دوطرفہ تعلقات کی حقیقی مضبوطی کی بحالی کے لئے بلا تکلف اور کھلے دل سے گفت و شنید کرنے کی ضرورت ہے۔ پاک ایران تعلقات مشترکہ اقدار، عقیدے سے تقویت پاتے ہیں اور سب سے بڑھ کر علاقائی امن، استحکام اور ترقی کے بارے میں ہمارے مشترکہ خدشات ہیں۔ وہ ایران کی سپریم نیشنل سیکورٹی کونسل کے سیکریٹری علی شمخانی سے گفتگو کر رہے تھے جنہوں نے جمعرات کو یہاں وفد کے ہمراہ پنجاب ہاؤس میں ان سے ملاقات کی۔ ملاقات میں پاک ایران دوطرفہ تعلقات، سلامتی کے شعبہ میں باہمی تعاون، سرحدی انتظام، علاقائی امن کی ترقی اور علاقائی صورتحال سمیت سلامتی کے تمام شعبوں میں دونوں ممالک کے مابین موجودہ تعاون کے فروغ دینے کے ذرائع اور طریقوں پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ پرامن اور خوشحال خطے کے لئے اپنے پختہ عزم کا اعادہ کرتے ہوئے دونوں رہنماؤں نے دہشت گردی کی لعنت، انٹیلی جنس معلومات کے تبادلے اور دونوں ممالک کی سیکورٹی ایجنسیوں کے مابین قریبی روابط بڑھاتے ہوئے سرحد پار اور کثیر القومی جرائم سمیت باہمی چیلنجوں پر قابو پانے سے متعلق تعاون بڑھانے کے لئے موجودہ میکنزم کو مضبوط بنانے اور مل کر کام کرنے کے عزم کا اظہار کیا۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ پاک ایران تعلقات کو مزید مستحکم بنانے اور اپنے دوستانہ تعلقات سے زیادہ سے زیادہ استفادہ کرنے کی کنجی نہ صرف ایک دوسرے پر باہمی اعتماد کرنے اور مسائل کے حل کے لئے تمام سطحوں پر ایک دوسرے کے ساتھ بیٹھ کر بات کرنے میں ہے بلکہ یہ سمجھنے میں بھی ہے کہ باہمی معاملات کو حل کرنے میں ناکامی نہ صرف ہمارے مشترکہ دشمنوں کو مضبوط کرے گی بلکہ دونوں ملکوں اور خطے کے مفادات کو بھی نقصان پہنچائے گی۔ اس کے علاوہ مسلم امہ کے اتحاد پر بھی اس کے منفی اثرات مرتب ہوں گے۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ پاکستان اور ایران کی مضبوط اور اسٹریٹجک شراکت داری نہ صرف دونوں ملکوں کے مفاد میں ہے اور اپنی مکمل صلاحیتوں کے ادراک میں معاون ہے بلکہ خطے کے امن، استحکام اور سماجی و اقتصادی ترقی کے لئے بھی مثبت نتائج کی حامل ہوگی۔ ایڈمرل علی شمخانی نے وزیر داخلہ کے خیالات کو سراہتے ہوئے پاکستان اور ایران کے برادرانہ تعلقات کو مزید مستحکم بنانے کے لئے اپنے مضبوط عزم کا اظہار کیا۔ انہوں نے حکومت پاکستان کے مسلم ممالک میں امن و استحکام کے لئے اصولی موقف اور مسلم ممالک کے مابین متنازعہ معاملات کا حل تلاش کرنے میں مذاکرات کو ایک موثر ترین ذریعہ کے طور پر فروغ دینے کو بھی سراہا۔ انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک خطے اور مسلم امہ کے باہمی مفاد میں ایرانی قیادت اور عوام پاکستان کے حکومت اور عوام کے ساتھ اپنے برادرانہ تعلقات کو مستحکم بنانے کے خواہاں ہیں۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -