قائداعظم نے دوشادیاں کیں ،دوسری بیوی رتی نے محمد علی جناح کو ٹوٹ کرچاہا

قائداعظم نے دوشادیاں کیں ،دوسری بیوی رتی نے محمد علی جناح کو ٹوٹ کرچاہا
قائداعظم نے دوشادیاں کیں ،دوسری بیوی رتی نے محمد علی جناح کو ٹوٹ کرچاہا

  

کراچی(ویب ڈیسک)بانی پاکستان قائداعظم محمد علی جناح ایک اصول پسند شخصیت تھے،انہوں نے پوری زندگی اپنے اصولوں پرسمجھوتہ نہیں کیا،قائداعظم کی اصول پسندی کی وجہ سے بعض لوگ انہیں سخت مزاج بھی قراردیتے ہیں حالانکہ حقیقت اس کے بالکل برعکس ہے،قائداعظم محمدعلی جناح ایک گداز اورمحبت کرنے والا دل رکھتے تھے ،،اس کا اندازہ ان کے ازدواجی حالات کو دیکھ کرہوتا ہے،اپنی ازدواجی زندگی کے حوالے سے محمدعلی جناح خوش قسمت واقع نہیں ہوئے،محمدعلی جناح کی پہلی شادی1892میں اپنی کزن ایمی بائی سے ہوئی،جناح کی عمراس وقت پندرہ سولہ سال کے قریب تھی اورانہیں اعلیٰ تعلیم کے لئے انگلینڈ جانا تھا،مگرمحمدعلی جناح کی والدہ کا اصرارتھا کہ وہ لندن جانے سے پہلے شادی کریں،بدقسمتی سے یہ شادی زیادہ دیرنہ چلی،قائداعظم انگلینڈچلے گئے اورچند ہی ماہ میں ایمی بائی ایسی بیمارہوئیں کہ جانبرنہ ہوسکیں،،محمدعلی جناح کی دوسری شادی پوری ایک افسانوی کہانی ہے،،پارسی گھرانے کی جواں سال لڑکی رتی جنا ح کے عشق میں گرفتارہوئی،اس وقت رتی کی عمرصرف سولہ سال تھی جبکہ محمدعلی جناح زندگی کی انتالیس بہاریں دیکھ چکے تھے،جناح نے شادی کے لئے رتی کو سن بلوغ تک انتظارکرنے کو کہا،رتی جناح سے والہانہ محبت کرتی تھیں اسی لئے دوسال بعد انہوں نے اپنا گھراوروالدین چھوڑے اورمحمدعلی جناح سے شادی کرلی،،1918میں شادی سے پہلے رتی نے اسلام قبول کیا اوران کا اسلامی نام مریم رکھا گیا،شادی کے ابتدائی سال توکافی خوشگوارگذرے ،یہ رتی کے عین شباب کا زمانہ تھا اورکہاجاتا تھا کہ ہندوستان کی پردہ نہ کرنے والی عورتوں میں رتی جناح سے شاید ہی خوبصورت کوئی عورت ہو،رتی اورمحمدعلی جناح کی ایک بیٹی بھی ہے جس کا نام دینا رکھا گیا،،جناح کی سیاسی مصروفیات کی وجہ سے رتی تنہائی کاشکاررہنے لگیں اورپھرنوبت علیحدگی تک پہنچ گئی،مگراس دوران بھی رتی نے جناح کو خطوط لکھے جس میں ان سے اپنی محبت کا اظہارکیا،،بدقسمتی سے رتی جوانی ہی میں کینسرکے مرض میں مبتلا ہوگئیں اورمحض اٹھائیس سال کی عمرمیں انتقال کرگئیں،کہتے ہیں قائداعظم محمدعلی جناح صرف دوموقعوں پرجذباتی ہوئے ،ایک جب رتی کا انتقال ہوا اوردوسراجب پاکستان آنے سے پہلے وہ بمبئی میں آخری باررتی کی قبرپرگئے

مزید :

قومی -