وکیل کے بیٹے کا قتل،دو ایس ایچ اوز سمیت پولیس کے خلافمقدمہ چالان طلب

وکیل کے بیٹے کا قتل،دو ایس ایچ اوز سمیت پولیس کے خلافمقدمہ چالان طلب

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج نے سی سی پی او لاہورکووکیل کے بیٹے کو اغواء کرکے قتل کرنے کے مقدمہ میں ملوث 2ایس ایچ اوز سمیت دیگر پولیس اہلکاروں کے مقدمہ کا چالان پیش کرنے کا حکم دے دیا ہے۔استغاثہ کے مطابق ملزمان ایس ایچ اوز عمران قمر، خالد پرویز اور نوید اسلم سمیت دیگر پولیس اہلکاروں پر الزام ہے کہ انہوں نے 21مئی 2015ء کو احتشام مسعود کو سیشن کورٹ کے گیٹ سے اغواء کرنے کے بعدتشدد کا نشانہ بنایا جس کے باعث وہ جاں بحق ہوگیا،جبکہ مذکورہ پولیس اہلکاروں نے مقتول کی نعش بھی لاوارث قرار دے کر جناح ہسپتال کے مردہ خانے میں بھجوادی ،بعدازاں پولیس نے مقتول کے والد ایڈووکیٹ مسعود اختر کی مدعیت میں تھانہ اسلام پورہ میں درج کروایا،مقدمہ مدعی مسعود اختر ایڈووکیٹ نے موقف اختیار کیا ہے کہ پولیس نہ تو مبینہ طور پرقتل میں ملوث مذکورہ پولیس اہلکاروں کو گرفتار کررہی ہے اور نہ ہی مذکورہ مقدمہ کا چالان عدالت میں پیش کیا جارہا ہے۔

، عدالت نے سی سی پی او لاہورکو حکم دیا ہے کہ وہ اپنی نگرانی میں اس کیس کی تفتیش مکمل کروائیں اورمقدمہ کا چالان پیش کریں۔

مزید : میٹروپولیٹن 4