لا چی میں تیل کمپنیوں کو غیر مقامی افراد نکالنے کی وارننگ ورزی پر سخت کاروائی

لا چی میں تیل کمپنیوں کو غیر مقامی افراد نکالنے کی وارننگ ورزی پر سخت کاروائی

پشاور ) سٹاف رپورٹر( خیبر پختونخوا کے وزیر قانون و پارلیمانی امور امتیاز شاہد قریشی نے تحصیل لاچی میں کام کرنے والی تیل کمپنیوں او جی ڈی سی ایل اور مول کو ایک ماہ کی مہلت دیتے ہوئے خبردار کیا ہے کہ وہ فوری طور پر باہر سے لائے گئے افراد کو فارغ کرکے مقامی لوگوں کو بھرتی کریں ورنہ اس کے نتائج خطرناک ہوں گے۔انہوں نے اس تاثر کو بے بنیاد قرار دیا کہ مزکورہ کمپنیاں علاقے میں ترقیاتی کاموں کے لئے فنڈز دے رہے ہیں انہوں نے حلفاً کہا کہ گزشتہ 3سالوں کے دوران ان کمپنیوں نے ترقیاتی کاموں کے لئے ایک پائی بھی نہیں دی ہے۔یہ درملک روڈ بھی صوبائی ADPسے بن رہا ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کے روز لاچی میں 2کروڑ روپے لاگت کے درملک روڈ کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب سے دوسروں کے علاوہ تحصیل نائب ناظم لاچی ناظر خان، نائب ناظم اربن ون عارف مصطفیٰ،تحصیل کونسلر خانزادہ محمد عالم، ناظم نیبرہوڈ اربن ون احسان خان،ممبرویلیج کونسل درملک جاوید،پی ٹی آئی کے مقامی رہنماریاض خان اور بشیر خان نے بھی خطاب کیا اور علاقے کی ترقی کے لئے وزیر موصوف کی خدمات کو سراہا۔دریں اثناء مہمان خصوصی نے ٹی ایم اے ایمپلائیز یونین لاچی کے نومنتخب عہدیداروں سے بھی حلف لیا حلف برداری کی تقریب میں لوکل گورنمنٹ ایمپلائیز فیڈریشن کے جنرل سیکرٹری انور کمال اور دوسرے صوبائی عہدیدار بھی موجود تھے۔

سخت کارروائی

مزید : پشاورصفحہ اول