سنکیانگ کے بارے مغربی میڈیا پر کبھی یقین نہیں کیا، ، مصری صحافی

سنکیانگ کے بارے مغربی میڈیا پر کبھی یقین نہیں کیا، ، مصری صحافی

بیجنگ(آئی این پی/شِنہوا)"سلک روٹ سے وابستہ ممالک کی مشہور شخصیات کے ایک وفدنے حال ہی میں چین کی سنکیانگ اکیڈمی (بقیہ نمبر31صفحہ12پر )

آف سوشل سائنسز کا دورہ کیا۔مذکورہ وفد نے مقامی سطح پر سماجی واقتصادی ترقی اور چین کی قومیتی اور مذہبی پالیسیوں جیسے موضوعات پر متعلقہ ماہرین اور علماء کے ساتھ تبادلہ خیال کیا۔ترکی،مصر،افغانستان، فلسطین اورسلک روٹ سے وابستہ دیگر ممالک سے آنے والی8مشہور شخصیات نے سنکیانگ میں کثیر الثقافتی اور کثیر المذہبی ہم آہنگی پر مثبت اور دلچسی کا اظہار کیا ۔مصر کے "ریڈیو اور ٹیلی ویڑن"میگزین کے چیف ایڈیٹر خالد حنفی نے کہا کہ سنکیانگ کے دورے کے دوران انہوں نے دیکھا ہے کہ چین،خاص طور پر سنکیانگ میں بہت سی قومیتیں اور مختلف مذاہب کے لوگ موجود ہیں۔چینی حکومت تمام قومیتوں کی مختلف ثقافتوں کی حفاظت اور مذہبی عقائد کی آزادی کی حفاظت کے لئے بھرپور کوشش کر رہی ہے لیکن مغربی ذرائع ابلاغ کے منفی پروپگیڈے کی وجہ سے دنیا میں بہت سے افراد حقیقی سنکیانگ کو نہیں جانتے۔ترکی مور گروپ کی چیئرپرسن سانگول بیرم نے کہا کہ اس دورے میں انہوں نے ایک پرامن اور خوبصورت سنکیانگ دیکھا اور انہوں نے سنکیانگ پر مغربی میڈیا کی غلط رپورٹس پر کبھی بھی یقین نہیں کیا۔

اب وہ سنکیانگ پہنچی ہیں اورہر چیز کا خود مشاہدہ کیا ہے ،جس نے سنکیانگ کے حوالے سے انکا اعتماد مزید بڑھایا ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر