کالے ہرن کے شکار پر پابندی کی درخواست پر کمشن سربراہ ہائیکورٹ طلب

کالے ہرن کے شکار پر پابندی کی درخواست پر کمشن سربراہ ہائیکورٹ طلب

لاہور (نامہ نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے کالے ہرن کے شکار پر پابندی اور نسل بقا کے لیے دائر درخواست پر کمشن کے سربراہ ڈاکٹر پرویز حسن کو 14 نومبر کو ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا۔جسٹس شکیل الرحمان خان نے ایڈووکیٹ شیرازذکاء کی درخواست پر سماعت کی جس میں کالے ہرن کی نسل کو لاحق شدید خطرات کی نشاندہی کی گئی ہے درخواستگزار وکیل نے عدالت کے روبرو پیش ہوکر موقف اختیار کیا کہ کالے ہرن کی نسل کی بقا کے لئے حکومت اقدامات کرنے میں ناکام ہو چکی ہے وکیل نے نشاندہی کی کہ کالے ہرن کی نسل کو شدید خطرات لاحق ہیں عدالت کو آگاہ کیا گیا کہ عدالت عالیہ معاملے پر تین رکنی کمشن تشکیل دے چکی ہے تاہم کمشن کی جانب سے دی گئی تجاویز پر عملدرآمد نہیں ہو رہا وکیل نے استدعا کی کہ عدالت حکومت کو کالے ہرن کے شکار پر پابندی اور نسل بقا کے لیے اقدامات کا حکم دے عدالت نے درخواست پر کارروائی کرتے ہوئے کمشن کے سربراہ کو آئندہ سماعت پر ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا۔

مزید : صفحہ آخر