فلیگ شپ ریفرنس قطری شہزادے کو سوالنامہ پہلے بھیجنے پر جے آئی ٹی رضا مند نہیں تھی ، واجد ضیا

فلیگ شپ ریفرنس قطری شہزادے کو سوالنامہ پہلے بھیجنے پر جے آئی ٹی رضا مند نہیں ...

اسلام آباد (آئی این پی ) فلیگ شپ ریفرنس میں جے آئی ٹی سربراہ واجد ضیا پر چھٹے روز بھی خواجہ حارث کی جرح مکمل نہیں ہو سکی ،واجد ضیا نے بتایا کہ جے آئی ٹی نے 13 مئی 2017کو حماد بن جاسم کو خط لکھا کہ وہ جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہو کر اپنا بیان ریکارڈ کروائیں جواب میں حماد بن جاسم نے لکھا کہ آپ لوگ دوحہ آ کر بیان ریکارڈ کروائیں اور سوالنامہ پہلے فراہم کریں، قطری شہزادے کو سوالنامہ پہلے بھیجنے پر جے آئی ٹی رضا مند نہ ہوئی، قطری شہزادے نے جے آئی ٹی کے خطوط کے جواب میں پہلے پاکستان آنے سے معذرت کی مگربعد میں ملاقات پر مشروط رضا مندی ظاہر کا اظہار کیا۔احتساب عدالت میں گزشتہ روز فلیگ شپ ریفرنس کی سماعت ہو ئی، نواز شریف کو حاضری کے بعد احتساب عدالت سے جانے کی اجازت دیدی گئی،واجد ضیا سے غیر متعلقہ سوال پوچھنے پر نیب کا اعتراض منظور کرتے ہوئے جج ارشد ملک نے ریمارکس دیئے خواجہ حارث واجد ضیا سے صرف متعلقہ سوالات ہی پوچھیں۔ خواجہ حارث آج بھی واجد ضیا پر جرح جاری رکھیں گے،نواز شریف کے خلاف فلیگ شپ ریفرنس کی سماعت(آج) منگل تک ملتوی کردی گئی۔

مزید : صفحہ آخر