ٹوئٹر کا لائیک بٹن ختم کرنے پر غور

ٹوئٹر کا لائیک بٹن ختم کرنے پر غور

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)ٹوئٹر نے اپنے پلیٹ فارم میں ہارٹ کی شکل کا لائیک بٹن ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔یہ دعویٰ برطانوی روزنامے ٹیلیگراف کی ایک رپورٹ میں سامنے آیا ہے۔رپورٹ میں ٹوئٹر کے بانی جیک ڈورسے کے حوالے سے یہ دعویٰ کرتے ہوئے بتایا گیا کہ گزشتہ ماہ کمپنی کے ایک ایونٹ کے دوران جیک ڈورسے نے کہا کہ وہ بہت جلد لائیک بٹن سے چھٹکارہ حاصل کرلیں گے۔ان کا کہنا تھا 'میں دل کی شکل کے بٹن کو زیادہ پسند نہیں کرتا'۔رواں سال مارچ میں ٹوئٹر نے بک مارک کا بٹن متعارف کرایا تھا جو کہ صارفین کو لائیک بٹن پر کلک کیے بغیر ٹوئیٹس محفوظ کرنے میں مدد دیتا ہے۔رپورٹ کے مطابق ٹوئٹر کی جانب سے لائیک بٹن کو ختم کرنے کا مقصد اس پلیٹ فارم میں بحث کے صحت مند ماحول کو تشکیل دینا ہے جس کے لیے کمپنی کافی عرصے سے کوششیں کررہی ہے۔ٹوئٹر بانی کچھ عرصے قبل بھی ایک کانفرنس کے دوران لائیک بٹن کے حوالے سے عدم اطمینان کا اظہار کرچکے ہیں 'ہمارے پاس دل کی شکل کا ایک بڑا لائیک بٹن ہے، تاکہ لوگوں کو اس کے استعمال کی تحریک ہو، مگر کیا یہ درست ہے؟ یعنی عوامی بات چیت یا صحت مند بحث کے مقابلے میں؟ ہم اس کی مدد سے اچھی بات چیت کے لیے لوگوں کو کیسے تیار کرسکتے ہیں؟'مگر ٹوئٹر صارفین نے لائیک بٹن کو ہٹانے کا فیصلہ کچھ زیادہ پسند نہیں آیا۔

ٹوئٹر

مزید : صفحہ آخر