حکومت کی طرف سے پارلیمانی جماعتوں کو میثاق معیشت کی پیشکش

حکومت کی طرف سے پارلیمانی جماعتوں کو میثاق معیشت کی پیشکش

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر ،صباح نیوز) قومی اسمبلی میں بالواسطہ طور پر حکومت کی طرف کی طرف سے پارلیمانی جماعتوں کو قومی میثاق معیشت کی پیش کش کر دی گئی قومی معیشت کی دگرگوں حالات پر بحث کیلئے حکومتی تحریک کو منظور کر لیا گیا بحث کے لیے آج (منگل کو) پرائیویٹ ممبر ڈے کی کاروائی کو موخر کر دیا گیا ہے پیر کو وزیر مملکت برائے پارلیمانی امور علی محمد خان نے تحریک التواء پیش کی کہ ایوان میں پاکستان کی معیشت کی حالت پر بحث کی جائے تحریک کو منظور کر لیا گیا اپوزیشن نے اعتراض نہیں کیا ہے علی محمد خان نے کہا کہ دگرگوں معاشی حالات ہمیں ورثہ میں ملے ہیں پارلیمینٹ میں معاشی صورتحال پر بامعنی بحث ہونا چاہیے 30-40سالوں سے یہ مسئلہ درپیش ہے پارلیمینٹ میں دگر گوں معاشی حالات کے حل کے لیے تجاویز پیش کی جائیں وزیر اعظم عمران خان نے ہدایت کی ہے کہ اس پر ایوان میں سیر حاصل بحث کروائی جائے قومی میثاق معیشت بننا چاہیے اپوزیشن کی تجاویز کا خیر مقدم کریں گے میثاق معیشت کی دستاویزات تیار کرنے کے لیے خصوصی کمیٹی بنائی جائے ملک میں دنیا بھر سے ماہرین معیشت کو مدعو کیا جائے گا حکومت اپوزیشن کی مشاورت سے میثاق معیشت بنانا چاہتی ہے جس تسلسل سے عملدرآمد ہونا چاہیے چاہے کسی کی بھی حکومت ہو۔

میثاق معیشت

مزید : صفحہ اول