وہ سرکاری ملازم جس نے اپنے کمپیوٹر پر فحش فلمیں دیکھ دیکھ کر حکومتی نیٹ ورک ہی ’تباہ‘ کردیا

وہ سرکاری ملازم جس نے اپنے کمپیوٹر پر فحش فلمیں دیکھ دیکھ کر حکومتی نیٹ ورک ...
وہ سرکاری ملازم جس نے اپنے کمپیوٹر پر فحش فلمیں دیکھ دیکھ کر حکومتی نیٹ ورک ہی ’تباہ‘ کردیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) فحش فلمیں دیکھنا بھی کسی نشے کی لت کی مانند ہوتا ہے، جو انسان کی اخلاقیات کا جنازہ تو نکالتی ہی ہے لیکن ایک امریکی سرکاری ملازم کی اس لت نے پورے حکومتی نیٹ ورک کو ہی تباہ کر دیا ہے۔ ویب سائٹ nextgov.com کے مطابق یہ سرکاری اہلکار امریکی ادارے ’ یو ایس جیولوجیکل سروے‘ میں کام کرتا تھا اور اپنے سرکاری کمپیوٹر پر فحش فلمیں دیکھتا تھا۔ اس نے کچھ ہی عرصے میں فحش فلموں کی 9ہزار سے زائد ویب سائٹس وزٹ کیں اور ان ویب سائٹس کے ذریعے ایک ایسا وائرس اس کے کمپیوٹر میں گھس گیا جس نے پورے حکومتی نیٹ ورک کو ہی تباہ کر کے رکھ دیا۔

ایجنسی کے انسپکٹر جنرل نے بھی تصدیق کر دی ہے کہ یہ وائرس ایک ملازم کے کمپیوٹر سے نیٹ ورک میں آیا۔ رپورٹ کے مطابق اس ملازم نے جتنی فحش ویب سائٹس وزٹ کیں ان میں سے اکثر روسی تھیں اور امکان ظاہر کیا جا رہا ہے کہ یہ وائرس انہی میں سے کسی ویب سائٹ کے ذریعے ایجنسی کے نیٹ ورک میں داخل ہوا۔ اس سے قبل بھی امریکی اداروں میں ملازمین کے فحش فلمیں دیکھنے اور ان سے نیٹ ورک میں وائرس آنے کے واقعات رونما ہو چکے ہیں اور یہ مسئلہ اس قدر سنگین ہو چکا ہے کہ سرکاری اہلکاروں کو دفاتر اور سرکاری کمپیوٹرز پر فحش فلمیں دیکھنے سے روکنے کے لیے قانون سازی کی جا رہی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس