پشاور‘ خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں فالج کا عالمی دن منایا گیا 

پشاور‘ خیبر ٹیچنگ ہسپتال میں فالج کا عالمی دن منایا گیا 

  

پشاور(سٹی رپورٹر) شعبہ طب، خیبر ٹیچنگ ہسپتال نے گزشتہ روز فالج کا عالمی دن منایا۔یہ دن دنیا بھر میں فالج کی علامات اور علامات کے بارے میں آگاہی پیدا کرنے اور لوگوں کو اس بات سے آگاہ کرنے کے لیے منایا جاتا ہے کہ جب کسی مریض کو فالج کی پہلی علامات ظاہر ہوں تو جلد از جلد قریبی طبی مراکز سے رجوع  کریں۔  اس کے اعتراف میں خیبر ٹیچنگ ہسپتال کے شعبہ طب نے ایک سمپوزیم کا انعقاد کیا جس میں فالج کی اہمیت اور موجودہ دور میں ذیابیطس، ہائی بلڈ پریشر، موٹاپا، بیٹھے بیٹھے طرز زندگی اور سگریٹ نوشی کے باعث اس کے بڑھتے ہوئے واقعات پر روشنی ڈالی گئی۔  سمپوزیم میں پروفیسر ہاشم الدین اعظم، چیئرمین شعبہ نے شرکت کی۔  آف میڈیسن ڈاکٹر اویس نعیم، ایسوسی ایٹ پروفیسر ڈاکٹر اقبال حیدر، اسسٹنٹ۔  پروفیسر ڈاکٹر زاہد اللہ خان، اسسٹنٹ۔  پروفیسر ڈاکٹر علینہ بادشاہ، ڈاکٹر فہد نعیم اور انڈر گریجویٹ اور پوسٹ گریجویٹ میڈیکل طلبا کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔  ڈاکٹر اقبال حیدر نے فالج سے متعلق آگاہی کی اہمیت پر روشنی ڈالی۔  ہر سال 15 ملین لوگ فالج کا شکار ہوتے ہیں۔  ان میں سے 60 لاکھ لوگ فالج یا اس کی پیچیدگیوں سے مر جاتے ہیں۔  4 میں سے 1 شخص فالج کا شکار ہو سکتا ہے۔  2021 ورلڈ اسٹروک ڈے کا تھیم قیمتی وقت ہے۔  شعبہ طب کے جونیئر اور سینئر ڈاکٹرز، نرسنگ اور پیرا میڈیکل سٹاف اور خیبر میڈیکل کالج پشاور کے انڈر گریجویٹ طلبا نے سمپوزیم کے بعد فالج سے متعلق آگاہی واک میں حصہ لیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -