امریکی ڈالر کی قدر میں کمی اورروپیہ مستحکم ہونا خوش آئند ہے،خرم شیر

  امریکی ڈالر کی قدر میں کمی اورروپیہ مستحکم ہونا خوش آئند ہے،خرم شیر

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کراچی کے صدر و رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا ہے کہ امریکی ڈالر کی قدر میں کمی اورروپیہ مستحکم ہونا خوش آئند ہے۔ اپوزیشن تماشے لگانے کی عادی ہے، ان کے پاس وقت نہیں کہ ڈالر کی گرتی ہوئی قیمت پربات کریں۔ روپیہ مستحکم ہونے کے ساتھ ساتھ اپوزیشن کی منفی سیاست دفن ہورہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پارٹی سیکریٹریٹ انصاف ہاوس سے جاری اپنے بیان میں کیا۔ خرم شیر زمان کامزید کہنا تھا کہ عالمی بینک کے مطابق مالی سال 2021 میں پاکستان کی معیشت بحال ہوئی ہے۔ ملک کا مالیاتی خسارہ بھی 7.3 فیصد تک بہتر ہوا ہے۔ پاپا ڈیڈی تحریک کا ایجنڈا صرف ملک کو بدنام کرنا ہے۔ بلاجواز احتجاج پاکستان کی معیشت کو نقصان پہنچا رہے ہیں۔ خرم شیر زمان کا مزید کہنا تھا کہ اگر سندھ میں آٹا، چینی، مرغی اور دیگر اشیاء خوردونوش کی قیمتیں بڑھ رہی ہیں تو اس کی ذمہ داری حکومت سندھ پر عائد ہوتی ہے۔ کمشنرکراچی، ڈپٹی کمشنرز اور اسسٹنٹ کمشنرز مہنگائی کو کنٹرول کرنے میں ناکام ہیں۔ کراچی کا پرائس کنٹرول ڈپارٹمنٹ سو رہا ہے، ناجائز منافع کمانے والوں کے خلاف اب تک کوئی کاروائی عمل میں نہیں لائی گئی۔ سندھ حکومت اپنی ناکامیوں کا ملبہ وفاقی حکومت پر ڈال کر عوام کو بے وقوف نہ بنائے۔ عوام باشعور ہیں اور پیپلز پارٹی کے کسی پراپگنڈے میں شامل نہیں ہونگے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان میں بین الاقوامی سرمایہ کاری کا سلسلہ جاری ہے۔ پی ٹی آئی حکومت میں ادارے خسارے کے بجائے اپنا ریونیو خود اکھٹا کررہے ہیں۔ عمران خان نے معیشت کی گاڑی صحیح پٹری پر چلادی ہے۔ عمران خان سے بغض رکھنے والے مخالفین درحقیقت ملک سے بغض رکھ رہے ہیں۔ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -