کراچی میں ایک مرتبہ پھر پرتشدد کارروائیاں شروع، آٹھ گھنٹوں میں باپ بیٹوں سمیت افراد کی زندگیوں کے چراغ گُل

کراچی میں ایک مرتبہ پھر پرتشدد کارروائیاں شروع، آٹھ گھنٹوں میں باپ بیٹوں ...
کراچی میں ایک مرتبہ پھر پرتشدد کارروائیاں شروع، آٹھ گھنٹوں میں باپ بیٹوں سمیت افراد کی زندگیوں کے چراغ گُل

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) شہرقائد میں ایک مرتبہ پھر پرتشدد کارروائیاں شروع ہوگئی ہیں اور رات بارہ بجے سے لے کر اب تک مختلف علاقوں میں فائرنگ اور تشدد کے واقعات میں باپ بیٹوں سمیت آٹھ افراد جاں بحق مارے گئے ہیں ۔ پولیس کے مطابق لیاری کے علاقے جھٹ پٹ میں فائرنگ سے تین افراد ہلاک ہوگئے ہیں ۔ نامعلوم موٹرسائیکل سواروں کی فائرنگ سے دو افراد موقع پر جاں بحق اور ایک شخص زخمی ہوگیاتھا جو ہسپتال منتقلی کے دوران ہی چل بسا۔ پولیس کے مطابق جاں بحق ہونیوالوں میں والد شکور اور اُن کے دوبیٹے عابد اور زاہد شامل ہیں ۔یونیورسٹی روڈ پر جامعہ کراچی کے قریب فائرنگ سے ایک شخص جاں بحق ہوگیا جس کی شناخت سلیم راحت کے نام سے ہوئی ہے ۔ شارع فیصل پولیس کے مطابق گلستان جوہر بلاک 17 میں لوگوں نے ٹیلیفون ایکس چینج کے قریب کھڑی ایک مشکوک کار کی اطلاع دی۔ تلاشی پر کار سے 3 افراد کی بوری بند لاشیں ملیں جنہیں شدید تشدد کے بعد گولیاں مار کر قتل کیا گیا، مقتولین کے جسموں پر سگریٹ سے جلائے جانے اور گلے پر پھندے کے نشانات بھی ہیں ، تینوں لاشیں جناح ہسپتال منتقل کردی گئیں جن کی شناخت نہیں ہو سکی۔ ادھر اورنگی ٹاﺅن نمبر 4 میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کرکے ایک شخص کو قتل کر دیا۔ پولیس کے مطابق مقتول کی شناخت کے لئے کوشش کی جارہی ہے۔

مزید :

کراچی -Headlines -