پشاور دھماکے اور وزیرستان میں ڈرون حملے ایک ہی سلسلے کی کڑی ہیں : جمعیت اہل حدیث پاکستان

پشاور دھماکے اور وزیرستان میں ڈرون حملے ایک ہی سلسلے کی کڑی ہیں : جمعیت اہل ...
پشاور دھماکے اور وزیرستان میں ڈرون حملے ایک ہی سلسلے کی کڑی ہیں : جمعیت اہل حدیث پاکستان

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)جمعیت اہلِ حدیث پاکستان نے پشاور اور شمالی وزیرستان میں ایک ہی روز ڈرون حملے اور بم دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ پشاور بم دھماکا اور شمالی وزیرستان میں ڈرون حملہ ایک ہی سلسلہ کی کڑی ہے ،ڈرون حملے کی طرح پشاور بم دھماکے میں بھی امریکی ہاتھ ملوث ہے جسے بے نقاب کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے مگر امریکہ کے” پٹھو حکمران“کسی صورت بھی اپنے ”آقا“ کا چہرہ بے نقاب کرنے کی جرات نہیں رکھتے ،اِن خیالات کا اِظہار جمعیت اہلِ حدیث پاکستان کے مرکزی راہنماﺅں حافظ خالد شہزاد فاروقی ،علامہ مولانا ثناءاللہ بھٹی ،شیخ سلیم الرحمن اور حافظ محمد علی یزدانی نے مرکز اہلِ حدیث لارنس روڈ پر ایک تقریب سے خطاب اور بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔اُنہوں نے کہا کہ امریکہ کسی صورت بھی پاکستان میں امن کا خواہاں نہیں ہے ،بھارت اسرائیل اور امریکی ٹرائیکا مل کر پاکستان کو تباہ کرنا چاہتے ہیں جبکہ ملک کی سیاسی قیادت بالغ نظری کا ثبوت دینے کی بجائے فی الفور طالبان سے مذاکرات کا آغاز کرنے کی بجائے غیر ملکی دباﺅ پر مذاکرات کی ناکامی کا راگ الاپ کر قوم کو بیوقوف بنانے کے درپے ہے۔اِن راہنماﺅں نے تحریکِ انصاف کے سربراہ عمران خان کی جانب سے طالبان کو پاکستان میں دفتر کھولنے کی اجازت دینے کے مطالبے کی تائید کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان کے مطالبے کی مخالفت کرنے والے زمینی حقائق نظر انداز کرتے ہوئے ملک و قوم کے دشمنوں کو خوش کرنے اور پاکستان میں دہشت گردی اور قتل و غارت کے لامتناہی سلسلے کی نئے سرے سے بنیاد رکھنے کے لئے مذاکرات سے قبل ہی مذاکرات کو ثبو تاژ کرنے اور سیاسی پوائنٹ سکورننگ کے لئے بلیم گیم کا کھیل شروع کئے ہوئے ہیں جسے جمعیت اہلِ حدیث سختی کے ساتھ رد کرتی ہے ۔

مزید :

لاہور -