سوشل میڈیا پر دوستی کا جھانسہ دیکرلڑکوں کو اغواءکرنیوالے گوجرانوالہ کے گروہ کو بچانے کیلئے بااثر افراد حرکت میں آگئے

سوشل میڈیا پر دوستی کا جھانسہ دیکرلڑکوں کو اغواءکرنیوالے گوجرانوالہ کے گروہ ...
سوشل میڈیا پر دوستی کا جھانسہ دیکرلڑکوں کو اغواءکرنیوالے گوجرانوالہ کے گروہ کو بچانے کیلئے بااثر افراد حرکت میں آگئے

  

گوجرانوالہ(مانیٹرنگ ڈیسک) سوشل میڈیا اور موبائل فون پر دوستی کا جھانسہ دے کر لڑکوں کو اغواءکرنیوالے گروہ کو بچانے کیلئے بااثرافراد حرکت میں آگئے ہیں اور مدعیوں کو دھمکاناشروع کردی جبکہ شناخت پریڈبھی رکوانے کی کوشش کی گئی ۔ دھمکیوں کی تصدیق کرتے ہوئے ایس پی سول لائن خرم شعیب جانباز نے بتایاکہ پولیس تفتیش رکوانے اور صلح کیلئے بااثرافراد مدعی پر دباﺅ ڈال رہے ہیں،خاتون سمیت پانچ ملزمان کی سنٹرل جیل میں شناخت پڑید سے روکاجارہاہے ۔ اُنہوں نے کہاکہ پاکستان میں انصاف کا حصول بہت مشکل ہے ، بااثر افراد ملزمان کی شناخت پر مدعی کو دھمکیاں دے رہے ہیں ۔ بتایاگیاہے کہ لاہور کے ایک بااثر شخص سمیت تین مدعی سامنے آئے ہیں ۔ یہ بھی انکشاف کیاگیاہے کہ مرکزی ملزم عدیل سابقہ تحصیل ناظم کا حقیقی بھتیجا ، خاتون ایم پی اے اور ایک ایم این اے کا قریبی عزیز ہے ۔ نجی ٹی وی چینل کے مطابق بااثر ملزمان نے مدعیوں کو جیل آنے سے روکنے کی کوشش کی لیکن مدعی جیل میں تو آگئے ، وہاں بھی ملزمان کے ساتھیوں کا پہرہ ہونے کی وجہ سے مدعی خوف کا شکار ہوئے اور پولیس کی موجودگی میں مدعیان کو دھمکیاں دی گئیں تاہم ایس پی سول لائن خود موقع پرپہنچ گئے اور گواہان کے تحفظ کی یقین دہانی کرائی ۔ یادرہے کہ ایک خاتون سمیت مذکورہ گروہ دوستی کا جھانسہ دے کر لڑکوں کو مختلف مقامات پر بلاتا اور پھر تاوان کے بدلے رہائی ملتی ، گرفتاری کے دن بھی گروہ کے قبضے سے بحریہ یونیورسٹی کا ایک طالبعلم بازیاب ہوا۔

مزید :

گوجرانوالہ -اہم خبریں -