لاہور ہائیکورٹ بارکی سول ججوں کی کمیشن کے ذریعے بھرتیوں کیخلاف قرارداد منظور

لاہور ہائیکورٹ بارکی سول ججوں کی کمیشن کے ذریعے بھرتیوں کیخلاف قرارداد منظور

  

لاہور (نامہ نگار خصوصی ) لاہور ہائی کورٹ بار نے پنجاب میں سول ججوں کی بھرتیوں میں پنجاب پبلک سروس کمیشن کے کردار کے خاتمہ کا مطالبہ کردیاہے۔اس سلسلے میں گزشتہ روز لاہور ہائی کورٹ بار کے اجلاس عام میں عظیم اکرم ایڈووکیٹ کی طرف سے پیش کی گئی قرار داد متفقہ طور پر منظور کرلی گئی ۔ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن کے صدر شفقت محمود چوہان کی سربراہی میں ہونے والے بار کے اجلاس میں عظیم اکرم ایڈووکیٹ کی طرف سے قرار داد پیش کی گئی جس میں کہا گیا ہے کہ آئینی تقاضہ ہے عدلیہ انتظامیہ کے زیر اثر نہ ہو اور آزاد ہو۔ سول جج صاحبان کی بھرتی بذریعہ پبلک سروس کمیشن کو سندھ ہائیکورٹ نے اپنے فیصلہ میں انتظامیہ کی عدلیہ میں مداخلت کے مترادف گردانا ہے اور جب اس فیصلہ کے خلاف حکومت سندھ اور سندھ پبلک سروس کمیشن نے سپریم کورٹ آف پاکستان میں اپیلیں دائر کیںتو سپریم کورٹ نے سندھ ہائیکورٹ کے فیصلے کودرست قرار دیا ۔

قرارداد منظور

مزید :

علاقائی -