عمران خان کو جلسوں میں شائستہ زبان استعمال کرنی چاہئے،سیاسی رہنمائ

عمران خان کو جلسوں میں شائستہ زبان استعمال کرنی چاہئے،سیاسی رہنمائ

  

لاہور(محمد نواز سنگرا// انویسٹی گیشن سیل) ملک کے سیاسی رہنماو¿ں نے عمران خان کے شہر شہر جلسوں کو تحریک انصاف کی کامیابی جبکہ حکومت رکن نے معمول کی سیاسی سرگرمیاں قرار دے دیا ہے۔ شہر شر جلسوں کیوجہ سے دن بدن حکومتی مشکلات میں اضافہ ہو رہاہے۔عمران خان کے طریقہ کار پر اختلا ف ضرور ہو سکتاہے لیکن ان کی باتیں عوام کے دلوں میں گھر کر رہی ہیں۔ حکمرانوں کو شان وشوکت کم اور عمران خان کو جلسوں میں شائشتہ زبان استعمال کرنی چاہیے۔ان خیالات کا اظہار ملک کے سیاسی رہنماو¿ں نے روز نامہ پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ہے۔ وفاقی پارلیمانی سیکرٹری رانا افضل خان نے کہا کہ جلسے جلوس کرنا کسی بھی شخص یا جماعت کا آئینی حق ہے عمران خان کے جلسے معمول کی سرگرمیاں ہے جس سے حکومت کو فرق نہیں پڑے گا ۔دھرنے کی ناکامی کی صورت میںعمران خان نے ملک کے مختلف شہروں میں جانے کا فیصلہ کیا۔سنیٹر کامل علی آغا نے کہا کہ عمران خان کے مختلف شہروں میں جلسوں سے عوامی رائے اپنے ساتھ ملانے کےلئے اچھی کاوش ہے۔لاہور میں جلسہ تاریخ ساز تھا دن بدن حکومتی مشکلات میں اضافہ ہو رہا ہے۔سنیٹر حاجی عدیل نے کہا کہ حکمرانوں کو شان و شوکت میں کمی لانی چاہیے ۔اوور بلنگ اور مہنگائی حکومت کو لے ڈوبے گی،جلسے ہر کسی کا جمہوری حق ہے عمران خان کوشائستہ زبان استعمال کرنی چاہیے۔رکن قومی اسمبلی عارف علوی نے کہا کہ تحریک انصاف شہر شہر جلسے کر کے عوام میں شعور پیدا کر رہی ہے اور پاکستان کی عوام جاگ اٹھی ہے ۔عمران خان کے نظریے کو دنیا کے کوئی طاقت روک نہیں سکتی ۔حکمران عوامی طاقت کا سامنا نہیں کر سکیں گے۔پیپلز پارٹی کی رہنما ناہید خان نے کہا کہ عمران خان کے طریقہ کار سے اختلاف ضرور ہے لیکن موجودہ مسائل کی صورت میں عمران خان لوگوں میں مقبول ہو رہے ہیں ان کی باتیں لوگوں کے دلوں میں نقش ہو رہی ہیں ۔عمران خان کی مقبولیت میں کمی کی بجائے اضافہ ہو رہا ہے لوگ گلے سڑے نظام کا خاتمہ چاہتے ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -