وزیراعلیٰ کے سابق معاون خصوصی شاہد نظامانی کے گھر پر چھاپہ

وزیراعلیٰ کے سابق معاون خصوصی شاہد نظامانی کے گھر پر چھاپہ
وزیراعلیٰ کے سابق معاون خصوصی شاہد نظامانی کے گھر پر چھاپہ

  

 سانگھڑ(مانیٹرنگ ڈیسک )سانگھڑ میں صوبائی وزیراعلیٰ کے سابق معاون خصوصی شاہد نظامانی کے گھر پر پولیس چھاپے کے بعد صورتحال کشید ہ ہوگئی، کئی گھنٹے تک پولیس اور نظامانی قبیلے کے مشتعل افراد میں آنکھ مچولی جاری رہی، فائرنگ اور شیلنگ کے بعد اہل علاقہ پولیس کے خلاف سراپا احتجاج ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق سانگھڑ کا نظامانی محلہ اچانک میدان جنگ بن گیا اور شہر کے مختلف مقامات پر پولیس اور مشتعل افراد میں آنکھ مچولی شروع ہوگئی۔ فائرنگ اور آنسو گیس شیلنگ کی آوازوں سے شہریوں میں خوف و ہراس پھیل گیا۔ذرائع کے مطابق چند روز قبل نظامانی اور بگٹی قبائل میں زمین کے تنازع پرتصادم ہوا تھا جس کے نتیجے میں نظامانی قبیلے کے حمایت یافتہ دو افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے تھے۔ تصادم کے بعد پولیس نے وزیراعلیٰ کے سابق معاون خصوصی شاہد نظامانی سمیت نظامانی اور بگٹی قبائل کے مختلف افراد کے خلاف مقدمات درج کئے اور اسی سلسلے میں پولیس نے صبح شاہد نظامانی کے گھر پر چھاپا مارا۔ چھاپے کے بعدعلاقے میں کشیدگی پھیل گئی اور مشتعل افراد نے ٹولیوں کی شکل میں شہر کا گشت شروع کردیا، مساجد سے شہر بند رکھنے کے اعلانات کیے گئے۔ اچانک کارروائی پر نظامانی محلے کے مکین پولیس کے خلاف سراپا احتجاج ہو گئے اور ٹائرجلاکر مختلف سڑکیں بند کردیں۔

مزید :

سانگھڑ -