ملک میں ریاست مدینہ کے دستور کا عملی نفاذ چاہتے ہیں،سردار شاکر مزاری

ملک میں ریاست مدینہ کے دستور کا عملی نفاذ چاہتے ہیں،سردار شاکر مزاری

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


لاہور(خبر نگار خصوصی)تحریک منہاج کے نائب ناظم اعلیٰ سردار شاکر مزاری نے کہا ہے کہ ملک میں ریاست مدینہ کے دستور کا عملی نفاذ چاہتے ہیں۔ریاست مدینہ میں رسول اللہ ﷺ نے عوامی فلاح وبہبود کا جو نظام قائم کیا تھا اس کی مثال دنیا کی تاریخ میں کہیں نظر نہیں آتی۔قائد تحریک ڈاکٹر طاہر القادری عوامی،سماجی اور سیاسی انقلاب کے ذریعے حضور اکرم ﷺ کے دئیے گئے نظام کو حقیقی روح کے ساتھ پاکستان میں نافذ کرنا چاہتے ہیں۔یہ وہ نظام ہو گا جس کے نفاذ سے اسلامیان پاکستان کو باوقار مقام ملے گا۔حضور اکرم ﷺ نے ریاست مدینہ میں قیام امن اور فلاح کا ایک ایسا نمونہ پیش کیا ۔


جس کو تمام مذاہب اور قبائل نے تسلیم کر کے امت واحد کی شکل اختیار کی۔وہ مختلف مکاتب فکر کے نامور علماء کرام کے اعلیٰ سطحی وفد سے ملاقات کے دوران گفتگو کر رہے تھے۔ اس موقع پر علامہ سید فرحت حسین شاہ،علامہ میر آصف اکبر،علامہ عثمان سیالوی،علامہ محمد حسین آزاد،علامہ ممتاز حسین صدیقی ودیگر موجود تھے۔

،علامہ رفیق رندھاوا،مفتی محمد جمیل، علامہ لطیف مدنی ودیگر بھی موجود تھے۔سردار شاکر مزاری نے کہا کہ واقعہ کربلا جابر اور ظالم حکمرانوں کے سامنے کلمہ حق بلند کرنے کی تعلیم دیتا ہے۔علمائے کرام محرم الحرا م میں امن اور اسلامی اخوت کے فروغ کیلئے کردار ادا کریں۔معاشرے میں برداشت اور رواداری کے کلچر کو فروغ دیں۔انہوں نے کہا کہ تحریک منہاج القرآن ملک میں فرقہ واریت ،انتہا پسندی ،دہشتگردی ،لسانی وگروہی تعصبات کا خاتمہ چاہتی ہے۔منہاج القرآن علماء کونسل ڈاکٹر طاہر القادری کی زیر سرپرستی ایک ایسا فورم ہے جو پاکستان بھر کے تمام علماء کرام کو اتحاد اور وحدت کی لڑی میں پرو کر ملک میں باہمی رواداری کا ماحول قائم کررہا ہے۔ملک میں اتحاد و یگانگت کی دعوت تمام مکاتب فکر کے علماء کرام تک لے جارہے ہیں تاکہ باہمی اتحاد اور اتفاق کے ذریعے علماء فکر حسینیؓ کو عام کریں اور ظالمانہ نظام کے خاتمے کیلئے متحد ہو جائیں۔