کینوو ا کی پیداوار کو سیڈ و ہا ر ویسٹ ٹیکنالوجی اپناکر بڑھایا جاسکتا ہے ،زر عی ماہرین

کینوو ا کی پیداوار کو سیڈ و ہا ر ویسٹ ٹیکنالوجی اپناکر بڑھایا جاسکتا ہے ،زر ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


سرگودھا(اے پی پی )ز رعی ماہرین نے کہاہے کہ پاکستان میں سیم وتھو ر سے متاثرہ اراضی پر بہترین پیداوار و غذائیت کی حامل فصل کینووا کی کا شت کو فروغ دیا جا نا چاہیے ۔ انہوں نے بتا یا کہ کینووا کی فصل کے بیج کو چاول کی طرح استعمال کیا جاتا ہے ۔ یہ فصل ہر طرح کی زمین پر ز یر کا شت لا ئی جاسکتی ہے ، ایسی ز مین جو خشک سالی سے متاثر ہویا سیم و تھور کی وجہ سے ز یر کا شت نہ لا ئی جاسکتی ہو وہاں کینووا کی کا شت کو فروغ د ے کر نہ صرف کسا ن کی آمدنی میں اضافہ کیا جاسکتا ہے بلکہ غذائی ضروریا ت پور ی کرنے کیلئے بھی وافر غلہ کی فراہمی یقینی بنائی جا سکتی ہے۔
دنیا میں گلوٹن سے مبر ہ غذائی اجنا س تیزی سے فروغ پارہی ہیں۔گلوٹن فر ی کینوو ا کو ملک میں روا ج دے کر بین الا قوامی ما رکیٹ سے کثیر زر مبا د لہ کما نے کے مواقعوں سے فا ئد ہ اٹھا نا چاہیے ۔ پاکستان میں کینوو ا کی فی ایکڑ پیداوار 35من ہے جسے بہتر سیڈ و ہا ر ویسٹ ٹیکنالوجی اپناکر بڑھایا جاسکتا ہے ۔
c

مزید :

کامرس -