بھارت اب پاکستان کے ساتھ فوجی کشیدگی ختم کرنا چاہتا ہے،امریکی میڈیا

بھارت اب پاکستان کے ساتھ فوجی کشیدگی ختم کرنا چاہتا ہے،امریکی میڈیا
بھارت اب پاکستان کے ساتھ فوجی کشیدگی ختم کرنا چاہتا ہے،امریکی میڈیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

کراچی(ویب ڈیسک)امریکی نشریاتی ادارے ’بلوم برگ‘کا کہنا ہے کہ بھارت اب پاکستان کے ساتھ فوجی کشیدگی ختم کرنے کے لیے کوشش کر رہا ہے۔ دونوں ممالک میں کشیدگی نے غیرملکی سرمایہ کاروں میں بے چینی پیدا کردی ہے۔ بھارتی اسٹاکس مارکیٹوں سے غیر ملکی سرمایہ کاروں نے اپنے پیسے اور بانڈ نکال لیے ہیں۔دونوں ممالک میں حالیہ کشیدگی1999کے بعد بدترین صورت حال ہے۔پاکستانی فوج نے بھارت کے اعلان کردہ سرجیکل اسٹرائیک کی تردید کرتے ہوئے اسے ایک خوشی فہمی قرار دیا ہے۔ پاکستان اور بھارت کے درمیان فوجی تناﺅ سترہ سال بعد اس شدت کے بعد سامنے آیا۔

روزنامہ جنگ کے مطابق وزارت خارجہ کے ایک اہلکار نے نا م ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ پاکستان کے اندر کارروائی کے دعویٰ کے بعد بھارت اب دونوں اطراف موجودہ فوجی کشیدگی کو ختم کرنا چاہتا ہے۔پاکستان کے ساتھ معاہدے یا تعلقات ختم کر کے صورت حال کو مزید خراب کرنے کا بھارت کا کوئی منصوبہ نہیں تاہم تجارتی تعلقات اور پانی کی تقسیم کے معاہدے کے از سر نو جائزے کے ذریعے سفارتی اور اقتصادی دباﺅ برقرا ر رکھنے گا۔ نئی دہلی کے ایک تھنک ٹینک کا کہنا ہے کہ بھارت اڑی واقعہ کا جواب تین صورتوں میں دینا چاہتا ہے، جن میں پاکستان کو روکنا،اپنی عوام کو مطمئن کرنا اور تلخی میں مزیداضافے کو روکنا ہے۔تاہم پہلے دو محرکات کو جانچنا قبل ازوقت ہے، سب سے دلچسپ پہلو شدت کو روکنے کے لئے اٹھائے گئے اقدامات ہیں۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں
بھارتی حکام کا کہنا ہے کہ بھارت نے فضائی طاقت کو استعمال نہیںکیا صرف اپنے فوجی پاکستانی علاقے میں بھیجے، جن میں پاکستان کی ڈبل ڈیجیٹ ہلاکتوں جب کہ کسی بھی بھارتی کے نہ مارے جانے کا دعویٰ کیا گیا۔ پاک فوج نے ان دعووں کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ’بھارت کی طرف سے کوئی سرجیکل سٹرائیک نہیں کی گئی یہ سرحد پار فائرنگ کا واقعہ ہے پاکستان نے یہ واضح کیا ہے کہ پاکستانی سرزمین پر ایک بھی سرجیکل سٹرائیک ہو ا تو اس کا بھرپور جواب دیا جائے گا۔

مزید :

کراچی -