ایل او سی پر بھارتی جارحیت، سپاہی سمیت 2شہید، 4شہری زخمی،پاک فوج کا جواب، دشمن کو بھاری جانی مالی نقصان

ایل او سی پر بھارتی جارحیت، سپاہی سمیت 2شہید، 4شہری زخمی،پاک فوج کا جواب، ...

  

 راولپنڈی،اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی فوج کی کنٹرول لائن پر بلا اشتعال فائرنگ اورگولہ باری کا سلسلہ جاری، جس کے نتیجے میں 15 سالہ لڑکاشہید جبکہ 80 سالہ بزرگ، خاتون سمیت 4 شہری زخمی ہو گئے، پاک فوج نے بھرپور جوابی اقدام کرتے ہوئے بھا رتی فوج کی چوکیوں کو نشانہ بنایا جس سے دشمن کا شدید جانی و مالی نقصان ہوا،جبکہ فائرنگ کے تبادلے میں پاک فوج کا سپاہی رفیق وطن کا دفاع کرتے ہوئے شہید ہو گیا۔ پاکستان نے لائن آف کنٹرو ل پر بھارتی فوج کی جانب سے جنگ بندی کی خلاف ورزی پر بھارتی ناظم الامور کو طلب کرکے سخت احتجاج ریکارڈ کرادیا۔آئی ایس پی آر کے مطابق بھارتی فوج نے ایک مرتبہ پھر جنگ بندی معاہدے کی خلاف و ر زی کرتے ہوئے بروہ اور تندر سیکٹر پر بلااشتعال فائرنگ کی، شہری آبادی کو بھاری ہتھیاروں سے نشانہ بنایا، فائرنگ کی زد میں آ کر 15 سا لہ لڑکا شہید ہو گیا جبکہ 80 سالہ بزرگ شہری سمیت 4 افراد شدید زخمی ہو گئے، زخمیوں کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا، آئی ایس پی آر کے مطابق فائرنگ کے تبادلے میں ایک پاکستانی فوجی سپاہی شفیق نے بھی جام شہادت نوش کیا۔ پاکستانی فوجوں نے فائر اگلنے والی بھارتی چوکیوں کو نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں بھاری نقصانات کی اطلاع ہے۔دوسری جانب دفتر خارجہ نے بھارتی فوج کی جانب سے جنگ بند ی کی خلاف ورزی پر بھارتی ناظم الامور گوروآہووالیاکو طلب کیا،بے گناہ شہریوں کی شہادت اور زخمی ہونے پر احتجاج ریکارڈ کرایا۔دفتر خا ر جہ کے بیان کے مطابق بھارت کی جانب سے ایل او سی کے تندر سیکٹر میں بلااشتعال فائرنگ کے نتیجے میں 15سالہ نوجوان ولید ولد محمد فرید شہید جبکہ وادی سونا اور کارتان کے رہائشی 25سالہ مصباح بیگم، 45سالہ ظہیر عباس، 80سالہ قاسم سائیں، 26سالہ سلیمان شدید زخمی ہو گئے تھے۔ ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق لائن آف کنٹرول اور ورکنگ بانڈری کیساتھ بھارتی قابض فورسز آرٹلری فائر، مارٹر اور خودکار ہتھیا ر وں سے مسلسل شہری آبادی کو نشانہ بنا رہی ہیں۔ رواں سال بھارت نے اب تک 2ہزار 387مرتبہ جنگ بندی کی خلاف ورزی کی جس کے نتیجے میں 19شہادتیں ہوئیں جبکہ 191بے گناہ شہری زخمی ہوچکے ہیں۔ دفتر خارجہ کے بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ بھارت عالمی قانو ن کی خلاف وزی کرتے ہوئے ایل او سی کے اطراف میں کشیدگی کو ہوا دے رہا ہے، جو خطے کے امن و استحکام کیلئے خطرہ ہے، بھارت ہمارے پرامن خطے کیلئے جاری جدوجہد کا امتحان مت لے اور خاموشی کو کمزوری نہ سمجھے،عالمی برادری کو بھارت کی ہٹ دھرمی اور جارحیت پر منی پالیسی کا فوری نوٹس لے کر اسے2003کے معاہدے کی پاسداری کاپابند بنائے۔

بھارت فائرنگ

مزید :

صفحہ اول -