پشاور میں پلاسٹک شاپنگ بیگز کیخلاف کریک ڈاؤن جاری

  پشاور میں پلاسٹک شاپنگ بیگز کیخلاف کریک ڈاؤن جاری

  

پشاور (سٹی رپورٹر)ضلعی انتظامیہ کا پشاور بھر میں پلاسٹک شاپنگ بیگ کے خلاف کریک ڈاؤن جاری ہے اور اس سلسلے میں کوہاٹ روڈ پر مختلف علاقوں میں کاروائی کرتے ہوئے 90 کلو پولی تھین پلاسٹک بیگز کو سرکاری تحویل میں لے لیا جبکہ مختلف علاقوں سے کم وزن روٹی فروخت کرنے پر بیشتر نانبائیوں کو گرفتار کر لیا گیا۔تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کی ہدایت پر ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنرمنیٰ ظاہر نے کوہاٹ روڈ پر دکانوں کا معائنہ کرتے ہوئے پلاسٹک پولی تھین بیگز کی موجودگی پر تین دکانداروں کو گرفتار کر تے ہوئے 90 کلو پولی تھین پلاسٹ بیگز کو سرکاری تحویل میں لے لیا۔جبکہ انھوں نے مزید کاروائی کر تے ہوئے کوہاٹ روڈ پر کم وزن روٹی فروخت کرنے پر 12 نانبائیوں کو گرفتار کر لیا۔ ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر حبیب اللہ نے حیات آباد کی مختلف مارکیٹوں میں نانبائیوں کی دکانوں میں روٹی کے وزن کا معائنہ کر تے ہوئے کم وزن روٹی فروخت کرنے پر 16 نانبائیوں کو گرفتار کر لیا۔ان گرفتار افراد کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔ واضح رہے کہ پولیتھین پلاسٹک شاپنگ بیگ پر صوبائی حکومت نے پابند ی عائد کی ہوئی ہے اور ضلعی انتظامیہ پشاور ان احکامات کی روشنی میں پلاسٹک شاپنگ بیگ کے خلاف کاروائیوں میں مصروف ہے۔ ڈپٹی کمشنر پشاور نے تاجر برادری کو خبر دار کیا ہے کہ وہ پولیتھین پلاسٹک شاپنگ بیگ کا استعمال نہ کریں۔بصورت دیگر قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی جس میں موقع پر موجود پلاسٹک شاپنگ بیگ کو قبضے میں لیتے ہوئے مالکان کو جیل بھی بھجوایا جائے گا اور اس ضمن میں تمام ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر ز کو ہدایات جاری کر دی گئی ہیں۔ڈپٹی کمشنر پشاور محمد علی اصغر کے مطابق پلاسٹک پولیتھین بیگز کے خاتمے تک کاروائیاں جاری رہیں 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -