خیبر، طورخم بارڈرپیدل آمدورفت کیلئے کھول دیاگیا 

خیبر، طورخم بارڈرپیدل آمدورفت کیلئے کھول دیاگیا 

  

خیبر (بیورورپورٹ) وزارت داخلہ نوٹیفیکیشن کے اجرا پر پیدل آمد و رفت کیلئے  طورخم بارڈربھی کھول دیا گیا  سات ماہ سے بند بارڈر، منگل بدھ جمعرات اور ہفتہ کے دن کھلا رہے گانوٹیفیکیشن میں قانونی دستاویزات لازمی قرار دیدیئے گئے مزدور طبقہ سمیت تاجر اور عوام میں خوشی کی لہر دوڑ گئی کوویڈ 19ایس او پیز کے مطابق تمام سرحدات بند ہونے کے تقریباً 7ماہ بعد وزارت داخلہ نے نوٹیفیکشن جاری کرتے ہوئے دیگر بارڈرز کی طرح طورخم بارڈر کو بھی کھول دیاگیا جو ہفتے میں چار دن قانونی دستاویزات پر سرحد پار کرنے کی اجازت  ہوگی بارڈر کھولتے ہی لنڈ ی کو تل میں مزدور طبقہ سمیت ٹریڈرز اور عوام میں خوشی کی لہر دوڑ گئی سینکڑوں مزدور، مزدوری کی غرض سے افغانستان گئے جبکہ وہاں سے افغانی باشندوں کا انا بھی شرو ع ہوا  افغانیوں نے حکومت پاکستان کے اس فیصلے کو خوش ائند قرار دیکر کہا کہ جس طرح مزدورں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا تھا اسی طرح ہزاروں کی تعداد میں مریض بھی عدم علاج کے باعث رل رہے تھے بارڈر کھولنے سے اب دونوں کا انے جانے میں اسانی ہو گی ضلع خیبر کے عوام نے بارڈر کھلنے کو خوش آئند قرار دیا اور روزگارمیں بہتری کیلئے بھی احسن اقدام قرار دیا افغان شہریوں نے بتا یا کہ افغانیوں کے ویزوں میں مدت ختم ہو گئی ہے چونکہ ا س سلسلے میں ان کے ساتھ نرمی کیاجائے تاکہ ان کے مریض علاج و معالجہ کے لئے پاکستان  آسکیں مزدور یونین کے صدر فرمان شینواری نے کہا کہ بارڈر کی بند ش سے سب سے زیادہ مزدور طبقہ متاثر ہو ا تھا انہوں نے پاکستانی سیکورٹی اداروں کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ بارڈر کھولنے سے مزدوروں کی جانوں میں جانیں اگئیں۔ٹریڈرز نے بھی اس موقع پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یہ احسن اقدام ہے کیونکہ سرحدات بند ہونے سے ملک کی معیشت پر منفی اثرات مرتب ہوتے ہیں جو ملک کو کھوکھلا بنا دیتاہے طورخم نادرا ذرائع نے بتا یا کہ سہ پہر تک249 افغان شہری پاسپورٹ ویزے پرپاکستان آگئے تھے جبکہ بارڈر رات آٹھ بجے تک کھلا رہے گا  

مزید :

پشاورصفحہ آخر -