وہ سرکاری افسران جنہیں حکومت نے نوکریوں سے فارغ یا قبل از وقت ریٹائر کرنے کا فیصلہ کر لیا 

وہ سرکاری افسران جنہیں حکومت نے نوکریوں سے فارغ یا قبل از وقت ریٹائر کرنے کا ...
وہ سرکاری افسران جنہیں حکومت نے نوکریوں سے فارغ یا قبل از وقت ریٹائر کرنے کا فیصلہ کر لیا 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن ) وفاقی حکومت نے مختلف الزامات کی زد میں آنے والے سرکاری افسران کو نوکری سے برخاست کرنے کا فیصلہ کرلیا جب کہ کرپٹ، نکمے اور نیب زدہ افسران کی نشاندہی اور قبل از وقت ریٹائرمنٹ کے فیصلے کے لیے کمیٹی قائم کردی گئی۔

نجی ٹی وی ایکسپریس نیوز نے ذرائع کے حوالے سے کہاہے کہ وفاقی کابینہ کے منظور کردہ رولز 2020 کے تحت کرپشن میں ملوث ملازمین، نیب کے ساتھ پلی بارگین کرنے والے، کارکردگی نہ دکھانے والے اور دو مرتبہ سپر سیڈ کیے جانے والے افسران کو ریٹائر کیا جاسکے گا۔

ذرائع کے مطابق کابینہ ڈویڑن کی بنائی گئی اعلیٰ سطح کمیٹی کے سربراہ ایڈیشنل سیکرٹری کابینہ ڈویژن ہوں گے جب کہ اسٹیبلشمنٹ ڈویژن، وزارت خزانہ کے نمائندے، وزارت قانون و انصاف کے ایڈیشنل ڈرافٹس مین اور ڈپٹی سیکرٹری ایڈمن کابینہ ڈویژن بھی کمیٹی کا حصہ ہوں گے۔

مزید :

قومی -