دنیا میں ترقی انصاف پر نہیں ہوتی تو معاشرے پر اثرات پڑتے ہیں ، وزیراعظم عمران خان 

دنیا میں ترقی انصاف پر نہیں ہوتی تو معاشرے پر اثرات پڑتے ہیں ، وزیراعظم عمران ...
دنیا میں ترقی انصاف پر نہیں ہوتی تو معاشرے پر اثرات پڑتے ہیں ، وزیراعظم عمران خان 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیراعظم عمران خان نے کہاہے کہ منی لانڈرنگ کے قانون بھی صرف طاقتور ملکوں کیلئے ہوتے ہیں،دنیا میں ترقی انصاف پر نہیں ہوتی تو معاشرے پر اثرات پڑتے ہیں ۔

وزیراعظم عمران خان نے یونیورسل فنڈ کی جانب سے کنٹریکٹ ایوارڈ کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ جو ایم او یو سائن ہوایہ ملک کیلئے خوش آئندہے،ہماراویژن ہے کہ غریب لوگوں کو اوپر لانا ہے ،جو علاقے پیچھے رہ گئے ان علاقوں کیلئے اچھا اقدام ہے ،پاکستان میں غریب علاقوں کو اوپر لانا مشن ہے ، بلوچستان میں بہت غربت ہے ،بلوچستان کو ماضی میں نظرانداز کیاگیا،سوئی کاعلاقہ گیس کے ذخائر کے باوجود پیچھے رہ گیا۔

وزیراعظم نے کہاکہ منی لانڈرنگ کے قانون بھی صرف طاقتور ملکوں کیلئے ہوتے ہیں،دنیا میں ترقی انصاف پر نہیں ہوتی تو معاشرے پر اثرات پڑتے ہیں ،انہوں نے کہاکہ انگلش میڈیم سکولوں کی دکانیں کھل گئیں اورسرکاری سکول پیچھے رہ گئے ،نظام تعلیم میں بھی بہتری کی ضرورت ہے ،60 ءکی دہائی میں پاکستان خطے میں تیزی سے اوپر جارہاتھا، دنیا میں پاکستان کی مثال دی جاتی تھی ،اس لئے پیچھے رہ گئے کیونکہ پلاننگ صرف امیروں کیلئے ہوتی تھی،60 کی دہائی میں سرکاری ہسپتالوں میں بہترین علاج ہوتا تھا، بڑے بڑے ممالک پاکستان کو دیکھتے تھے ۔ڈیجٹیلائزیشن پاکستان کا مستقبل ہے، آئی ٹی سیکرٹر پر خاص توجہ دے رہے ہیں ، خوش آئندبات ہے ملک جدت کی طرف جا رہا ہے۔

وزیراعظم نے کہاکہ قراقرم ہائی وے بننے سے پہلے گلگت بلتستان کے دوسرے علاقوں سے روابط نہیں تھا،موبائل فون کا بڑا فائدہ یہ ہے کہ جن علاقوں میں تعلیم نہیں ،وہاں تعلیم پہنچائے گا۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -