کوئی جنبش نہ اشارہ لوگو| رام ریاض |

کوئی جنبش نہ اشارہ لوگو| رام ریاض |
کوئی جنبش نہ اشارہ لوگو| رام ریاض |

  

کوئی جنبش نہ اشارہ لوگو

تم کو کس بات نے مارا لوگو

آج تنہائی میں دل ڈوب رہا ہے

بجھ گیا صبح کا تارا لوگو

اب تو ناراض نہ ہو گے ہم سے

کر لیا ہم نے کنارا لوگو

کوئی آندھی، نہ بگولہ، نہ ہوا

دشت خاموش ہے سارا لوگو

اپنی پرچھائیں تو جھک کر دیکھو

تم سکندر ہو کہ دارا لوگو

تم بھی بے برگ نظر آتے ہو

تم پہ چل جائے نہ آرا لوگو

رام دیکھا نہیں جاتا ورنہ

اور سب کچھ ہے گوارا لوگو

شاعر: رام ریاض

(شعری مجموعہ" پیڑ اور پتے":سال اشاعت؛بارِ دوم،2002  )

Koi    Junbish   Na   Ishaara   Logo

Tum   Ko    Kiss   Baat    Nay   Maara   Logo

Aaj   Tanhaai    Men    Dil    Doob   Gaya

Bujh   Gaya    Subh    Ka   Taara   Logo

Ab   To   Naraaz    Na    Hon    Gay   Ham   Say

Kar   Liya   Ham    Nay   Kinaara   Logo

Koi   Aandhi   ,   Na    Bagola  , Na    Hawaa

Dasht    Khamosh    Hay    Saara   Logo

Apni    Parchhaaen   To   Jhuk    Kar   Dekho

Tum    Sikandar   Ho    Keh    Daara   Logo

Tum    Bhi     Be Barg     Nazar     Aatay   Ho

Tum    Pe    Chall    Jaaey   Na    Aaara   Logo

RAM    Dekha    Nahen     Jaata   Warna

Aor    Sab    Kuchh     Hay     Gawaara    Logo

Poet: Ram   Riaz

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -