جعلی پولیس مقابلے میں نوجوان کی ہلاکت، 6 اہلکاروں کے خلاف قتل کا مقدمہ، ڈی ایس پی معطل، ڈی پی او عہدے سے فارغ

جعلی پولیس مقابلے میں نوجوان کی ہلاکت، 6 اہلکاروں کے خلاف قتل کا مقدمہ، ڈی ...
جعلی پولیس مقابلے میں نوجوان کی ہلاکت، 6 اہلکاروں کے خلاف قتل کا مقدمہ، ڈی ایس پی معطل، ڈی پی او عہدے سے فارغ

  

لاہور/وہاڑی (ڈیلی پاکستان آن لائن)انسپکٹر جنرل (آئی جی)  پنجاب پولیس  فیصل شاہکار نے وہاڑی میں 16 ستمبر کو جعلی پولیس مقابلے میں علی لیاقت نامی نوجوان کو ہلاک کرنے میں ملوث وہاڑی پولیس کے چھ  اہلکاروں کے خلاف سخت ایکشن لیتے ہوئے ان کے خلاف  قتل کا مقدمہ درج کرادیا۔

ترجمان پنجاب پولیس کے مطابق  جعلی مقابلے کے خلاف رپورٹ نہ کرنے پر ڈی ایس پی صدر وہاڑی سعادت علی کو  معطل کردیا گیا ہے جب کہ  انتظامی غفلت برتنے اور حقائق چھپانے پر ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر (ڈی پی او) وہاڑی رانا شاہد پرویز  کو عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔ واقعہ میں ملوث اہلکاروں ، ڈی ایس پی اور ڈی پی او کے خلاف انضباطی کارروائی کا آغاز کردیا گیا ہے۔ایڈیشنل آئی جی جنوبی پنجاب نے واقعہ کی میرٹ پر تفتیش کرنے کے لیے جے آئی ٹی تشکیل دیدی ہے ۔

ترجمان کا کہنا ہے کہ  اختیارات سے تجاوز کسی صورت قابلِ قبول نہیں۔ ایسے واقعات کی روک تھام کے لیے آئی جی پنجاب نے آر پی اوز کو ٹاسک سونپ دیا۔ 

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -وہاڑی -