عدالتی نظام آئینی لحاظ سے مضبوط ہے:چیف جسٹس

عدالتی نظام آئینی لحاظ سے مضبوط ہے:چیف جسٹس
 عدالتی نظام آئینی لحاظ سے مضبوط ہے:چیف جسٹس

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) چیف جسٹس آف پاکستان افتخار محمد چوہدری نے کہا ہے کہ وکلا پر قانون کی عملداری کی بھاری ذمہ داری عائد ہوتی ہے وہ انصاف کی فراہمی کا فریضہ ایمانداری سے سرانجام دیں۔ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ عدلیہ قانون کی محافظ ہے اور وکلا کا فرض ہے کہ وہ اپنے پیشہ کے ساتھ مخلص رہتے ہوئے انصاف کی فراہمی کے لئے عدلیہ سے تعاون کریں، عدالتوں کی بہتر کارکردگی سے عوام میں عدالتوں پراعتماد مزید بڑھے گا۔انہوںنے کہاکہ پاکستان کا عدالتی نظام آئینی لحاظ سے مضبوط ہے۔ انسانی حقوق کا تحفظ عدلیہ کی بنیادی ذمہ داری ہے، وکلا کو چاہئے کہ وہ بینچ اور بار کو درپیش چیلنجز سے نمٹنے کےلئے بھی کردار ادا کریں۔

مزید : لاہور