میانمار ،فوج کی جانب سے روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام جاری

میانمار ،فوج کی جانب سے روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام جاری
میانمار ،فوج کی جانب سے روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام جاری

  


یوغر(صباح نیوز)میانمار میں عالمی کوششوں کے باوجود روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام جاری ہے۔ فوج اور بدھ بھکشوں نے مزید متعدد گاں کو آگ لگا کر متعدد مسلمانوں کو زندہ جلادیا ہے۔ چھ روز میں بیس ہزار سے زائد زخمی اور بیمار مسلمان بنگلادیش میں داخل ہوئے ہیں۔

عرب ٹی وی کے مطابق میانمار میں دو روز پہلے بدھ بھکشوں نے مسلمانوں کے متعدد گاں کو آگ لگا کو بچوں اور خواتین کو زندہ جلادیا۔ مسلمانوں کے خلاف بدھ بھکشوں کی مہم چند برسوں سےجاری ہے لیکن گذشتہ سال سے فوج نے بھی منصوبہ بندی کے تحت مسلمانوں کو مارنا شروع کردیا ہے اور یہ سلسلہ تاحال جاری ہے۔اقوام متحدہ کے ایلچی اور امریکی حکام کے اپیلوں اور حکام سے ملاقاتوں کے باوجود مسلمانوں کی نسل کشی جاری ہے۔

افغانستان میں 11 ہزار امریکی فوجی تعینات ہیں اور مزید 4 ہراز فوجی بھیجے جائیں گے ، پینٹاگون

ہزاروں مسلمان ملک سے نکلنے کی کوشش میں کوسٹ گارڈز کے مظالم سے سمندر کی نذر ہوچکے ہیں۔ گذشتہ چھ روز سے لاکھوں روہنگیا مسلمان بنگلادیش کی سرحد پر موجود ہیں۔ بنگلادیشی فوج نے صرف بیس ہزار زخمی اور بیمار مسلمانوں کو داخلے کی اجازت دی باقی ماندہ لاکھوں سرحدوں پر بے یار مددگار بیٹھے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی