آدمی کو گلے کے کینسر کی تشخیص، معلوم ہوتے ہی دفتر میں اپنے ساتھ کام کرنے والے دوست کو مار ڈالا، اس دوست کا کیا قصور تھا؟جان کر پاکستانی مَرد اپنی جان بچانے کو بھاگیں گے

آدمی کو گلے کے کینسر کی تشخیص، معلوم ہوتے ہی دفتر میں اپنے ساتھ کام کرنے والے ...
آدمی کو گلے کے کینسر کی تشخیص، معلوم ہوتے ہی دفتر میں اپنے ساتھ کام کرنے والے دوست کو مار ڈالا، اس دوست کا کیا قصور تھا؟جان کر پاکستانی مَرد اپنی جان بچانے کو بھاگیں گے

  


نئی دلی(نیوز ڈیسک) خبردار! سگریٹ پینا صحت کیلئے خطرہ ہے لیکن کسی اور کو سگریٹ نوشی پر لگانا جان کا خطرہ بن سکتا ہے۔ اگر یقین نہ آئے تو بھارت میں پیش آنے والے اس افسوسناک واقعے کے بارے میں ضرور جان لیں، جہاں سگریٹ نوشی کے باعث کینسر کا مریض بننے والے ایک شخص نے اپنی بیماری کا پتا چلتے ہی اپنے دوست کو قتل کر ڈالا، کیونکہ مبینہ طور پر اس دوست نے اسے سگریٹ نوشی پر لگایا تھا۔

دی انڈی پینڈنٹ کی رپورٹ کے مطابق مستقیم احمد نامی شخص کو ڈاکٹر نے بتایا تھا کہ اس کے کینسر کی وجہ سگریٹ نوشی تھی۔ نئی دلی کے جنوبی علاقے میں واقع ایک ریسٹورنٹ میں کام کرنے والے 25 سالہ مستقیم نے جب یہ سنا کہ سگریٹ نے اسے کینسر کا مریض بنا دیا تھا تو وہ اس شخص کی جان کے درپے ہو گیا جس نے اسے سگریٹ سے متعارف کروایا تھا۔ پہلے تو اسے شدید غصہ آیا لیکن پھر یہ غصہ وحشت میں بدل گیا اور اس نے ریسٹورنٹ جا کر عنایت نامی شخص کے سر میں گولی مار کر اسے قتل کر دیا۔

وہ ایک چیز جو اکثر پاکستانی مَرد روزانہ استعمال کرتے ہیں، انہیں بانجھ بنارہی ہے، سائنسدانوں نے تاریخ کی واضح ترین وارننگ جاری کردی

پولیس کا کہنا ہے کہ قتل کے دیگر محرکات کا بھی جائزہ لیا جا رہا ہے۔ ریسٹورنٹ کے ملازمین کا کہنا ہے کہ مستقیم اور عنایت کے درمیان کچھ عرصے سے کشیدگی چل رہی تھی۔ بتایا گیا ہے کہ مقتول عنایت ایک محنتی اور قابل ملازم تھا اور مالکان کا منظور نظر بھی تھا۔ انہی وجوہات کی بناءپر مستقیم کے دل میں اس کے خلاف بغض پیدا ہو گیا تھا۔ اگرچہ مستقیم نے قتل کی وجہ یہی بیان کی ہے کہ عنایت نے اسے سگریٹ پر لگایا تھا لیکن پولیس کے مطابق یہ بات خارج از امکان نہیں کہ اس نے حسد اور رقابت کے باعث اسے قتل کیا ہو۔ پولیس نے ملزم مستقیم کو اس کے ایک رشتہ دار کے گھر سے گرفتار کر لیا ہے اور اس کے خلاف قانونی کارروائی جاری ہے ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس