امریکی محکمہ انصاف کی ہاروڑ یونیورسٹی کی داخلہ پالیسی پر تنقید

امریکی محکمہ انصاف کی ہاروڑ یونیورسٹی کی داخلہ پالیسی پر تنقید

  

واشنگٹن (خصوصی رپورٹ) امریکی محکمہ انصاف کا کہنا ہے ہاورڈ یونیورسٹی داخلہ پالیسی میں اپنی پرنسپل ریٹنگ کے ذریعے ایشین امریکن طلبہ کو نقصان پہنچاتی ہے ایک درخواست میں اس داخلہ پالیسی اور پرنسپل ریٹنگ کو چیلنج کیا گیاہے جمعرات کو امریکی محکمہ انصاف کی طرف سے عدالت میں جمع کرائے گئے جواب میں درخواست د ہندگان کے دعوے کی حمایت کی گئی درخواست میں متاثرہ طلبہ نے ہاورڈ یونیورسٹی پر الزام عائد کیا کہ اس نے ایشین امریکن طلبہ کی تعداد کو کم کرنے کیلئے داخلے کا معیار دوسر ے علاقوں کے طلبہ کے مقابلے میں مشکل رکھا گیا ہے اس پالیسی کا مقصد دوسرے علاقوں کے مقابلے میں ایشین امریکن طلبہ کی کو تعداد رکھا جانا ہے ہاروڈ یونیورسٹی کیخلاف 2014میں کیس ان طلبہ نے عدالت میں دائر کیا تھا جنہیں ایڈمشن دینے سے انکار کردیا گیا ،ہاروڈ یونیورسٹی نے اپنے جواب میں کہا کہ ایشین امریکن طلبہ کی پرنسپل ریٹنگ دوسروں کے مقابلے میں کم تھی مگر یونیورسٹی یہ بتانے سے قاصر رہی کہ یہ ریٹنگ کیسے کم تھی؟ یہ پہلا موقع ہے کہ امریکی محکمہ انصاف نے ہاورڈ یونیورسٹی کی داخلہ پالیسی کی مخالفت کی ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -