ٹوبہ ، بااثر چوہدریوں نے چوری کا الزام لگا کر نوجوان کو تشدد کرکے ہلاک کردیا

ٹوبہ ، بااثر چوہدریوں نے چوری کا الزام لگا کر نوجوان کو تشدد کرکے ہلاک کردیا

  

ٹوبہ ٹیک سنگھ (نمائندہ خصوصی) بااثر چوہدریوں نے چوری کا الزام لگا کر نوجوان کو بہیمانہ تشدد کرکے ہلاک کردیا ،تھانہ چٹیانہ کے گاؤں چک نمبر 327گ ب میں بااثر چوہدریوں شاہد ،مجاہد ،عرفان ،جہانزیب ،عبداللہ اور لالہ وغیرہ اپنے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ غریب محنت کش محمد بوٹا کے گھر زبردستی گھس گئے اور اسکے نوجوان بیٹے غلام مصطفی کو زبردستی گھر سے اٹھا کر اپنے ڈیرے پر لے گئے ،اور اس پر الزام لگایا کہ اس نے ہماری چوری کی ہے ،جس پر اسے بہیمانہ تشدد کا نشانہ بناتے رہے ،نوجوان غلام مصطفی کا والد محمد بوٹا اپنے دیگر ساتھیوں کے ہمراہ چوہدریوں کے ڈیرے پر جا کر بیٹے کی جان چھڑوانے کیلئے انکی منت سماجت کرتا رہا مگر کسی نے ایک نہ سنی ،بہیمانہ تشدد کے باعث غلام مصطفی کی حالت غیر ہوگئی تو ملزمان اسے نیم بے ہوشی کی حالت میں پھینک کر چلے گئے ،جس پر لواحقین اسے طبی امداد کیلئے لیکر گئے ،مگر وہ جانبر نہ ہوسکا اور دم توڑ گیا ،متوفی غلام مصطفی کے لواحقین نے بااثر چوہدریوں کی غنڈہ گردی اور تھانہ چٹیانہ پولیس کی بے حسی کے خلاف نعش ریلوے ٹریک پر رکھ کر شدید احتجاج کیا ،جس کے بعد تھانہ چٹیانہ پولیس نے بااثر ملزمان کے خلاف مقدمہ تو درج کرلیا مگر تاحال کوئی گرفتاری عمل میں نہ آسکی ،مقتول غلام مصطفی کے ورثاء نے اعلیٰ ارباب اختیار سے انصاف کی اپیل کی ہے ۔

مزید :

علاقائی -