افغانستان سے انگور کی پیدوار میں کمی سے قیمتیں بڑھ گئیں

افغانستان سے انگور کی پیدوار میں کمی سے قیمتیں بڑھ گئیں

  

پشاور(کرائم رپورٹر)پڑو سی ملک افغا نستان میں انگو ر کے پیداوار میں کمی اور تو رخم کے راستے انگور کے درا مد اد میں مشکلا ت کے بناء پر پشاور شہر کے مقا می ما رکیٹ میں انگور کی قیمتیں بڑ ھ گئی ہے فی کلو کی قیمت 200روپے تک پہنچ گئی ہے جبکہ مذید بڑھ جا نے کے امکانات سامنے آرہے ہیں تفصیلا ت کے مطابق پشاور شہر کے چھوٹے بڑے ما رکیٹ میں انگور کی قیمتیں آسما ن سے با تیں کر نے لگے ما ر کیٹ میں انگور کی فی کلو قیمت 150سے لیکر 200روپے تک فرو خت ہورہی ہے جو غر یب و متو سط طبقہ کے شہریو ں کے قو ت خرید سے با ہر ہے ۔ پشاور کے فرو ٹ منڈی میں کام کر نے والے بین القوا می تاجر عبید خان کے مطابق فرو ٹ کی قیمتیں گزشتہ سال کے مقا بلے میں زیا دہ ہے لیکن انگور کی قیمت میں دو گنااضا فہہو گیاہے جسکی بنیا دی دو وجوہا ت ہے ایک وجہ افغانستان میں اس سال انگو ر کے باغات میں پیدا وار کی کمی ہے سال 2017کے مقا بلے میں اس سال انگور کی پیداوار میں 30فیصد کمی واقع ہو ئی ہے جبکہ دوسری اہم وجہ تو ر خم کے راستے میں در آمداد و بر امداد کو مشکلا ت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے اور اکثر تور خم باڈر کی بندش سے بھی پھلو ں کی قیمتیں بڑ ھ جا تی ہے انہوں نے مذید بتایاکہ افغانستا ن کے مشہور انگور انڈیا اور انٹر نیشنل منڈیو ں میں فرو خت ہو رہی ہے اس سال اعلی قسم کے انگور پاکستان نہیں بھیج دیئے گئے ہیں انہوں نے بتایا کہ فرو ٹ منڈیو ں میں انگور کے طلب و رسد کا کھیل جا رہی ہے جسکا براست اثر غریب عوام پر پڑ رہا ہے ۔۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -