ڈی آئی جی مردان کا ڈی آر سی اور پولیس ڈرائیونگ سکول کا دورہ

ڈی آئی جی مردان کا ڈی آر سی اور پولیس ڈرائیونگ سکول کا دورہ

  

مردان(بیورورپورٹ)ڈی آئی جی مردان محمد علی خان نے پولیس اسسٹنس لائنز، ڈی آر سی ،پولیس ڈرائیونگ سکول کا دورہ کیا اورپولیس ڈرائیونگ سکول اینڈ ایجوکیشن یونٹ کے نئے بلڈنگ کا افتتاح کیاتھانہ صدر پہنچنے پر مردان پولیس کے چاق و چوبند دستے نے سلامی پیش کی، اس موقع پرضلعی پولیس سربراہ کیپٹن (ر) واحد محمود، ڈی ایس پی سٹی خالد خان و دیگر پولیس افسران موجود تھے۔ڈی آئی جی محمد علی خان نے پولیس ڈرائیونگ سکول اینڈ ایجوکیشن یونٹ کے نئے بلڈنگ کا افتتاح کے بعد خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اس سے عوام الناس کی سہولت کے ساتھ ساتھ پولیس ڈرائیونگ سکول کے کارکردگی میں مزید اضافہ ہوگا۔انہوں پولیس ڈرائیونگ سکول کے سٹاف سے ملاقات کرتے ہوئے ان کے کارکردگی پر اطمینان کا اظہار کیا۔دریں اثناء ڈی آئی جی محمد علی خان نے پولیس اسسٹنس لائنز کادورہ کرتے ہوئے عملے سے تعارفی ملاقات کی اور وہاں پر موجود عوام الناس سے پولیس اسسٹنس لائنز کی پبلک سروس کے بارے میں معلومات دریافت کی،پولیس اسسٹنس لائنز کے عملے کی کارکردگی اور ریکارڈ کو چیک کرتے ہوئے انہوں نے عملے کو عوام الناس کی خدمت کو خوش اسلوبی سے سرانجام دینے کے ہدایات بھی جاری کئے۔بعد ازاں ڈی آئی جی محمد علی خان نے ڈی آر سی سٹی سرکل کا بھی دورہ کیا جہاں پر انہوں نے چیئر مین ڈی آر سی احسان باچہ اور ممبران سے تعارفی ملاقات کی اور ان کے کارکردگی کو سراہتے ہوئے ڈی آر سی سٹی کو اعزازی ٹرافی سے بھی نوازا۔ اس موقع پر ڈی آئی جی محمد علی خان نے کہا کہ آپ لوگ دلوں کو جوڑنے والا کام کر رہے ہیں جس کا اجر اللہ تعالی بھی آپ لوگوں کو دیگا، پولیس کو ہدایت کی گئی ہے کہ کسی بھی نوعیت کے تنازعات میں فریقین کو مصالحتی کونسل کے پاس بھیجاجائے اور باہمی تنازعہ حل نہ ہونے کی صورت میں پرچہ درج کرکے قانونی کاروائی شروع کی جائے۔انہوں نے تنازعات کے حل کے لئے قائم مصالحتی کونسل کو جرگہ کانام دیتے ہوئے کہاہے کہ تنازعات کے حل کے لئے قائم مصالحتی مرکز کو حجرے کا نام دیاہے اور کہاہے کہ صدیوں سے جرگہ اور حجرہ کاکردار اہم رہاہے ۔ مصالحتی کونسل کے ممبران فریقین کے مابین غیر جانبداری،انصاف پر مبنی مصالحتی کردار اداکرے جس سے تنازعات بر وقت حل ہوں گے اور اللہ تعالی کی خوشنودی حاصل ہوگی اور معاشرے میں امن بھی قائم ہوگا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -