عوامی مسائل کے حل میں رکاؤٹ برداشت نہیں کی جائیگی ،شاہد مغل

عوامی مسائل کے حل میں رکاؤٹ برداشت نہیں کی جائیگی ،شاہد مغل

  

سخاکوٹ(نمائندہ پاکستان) ضلعی انتظامیہ ملاکنڈ کے زیر اہتمام گورنمنٹ ڈگری کالج بدرگہ میں ہونے والے کھلی کچہری کے دوران لوگوں نے منشیات فروشی ، بجلی لوڈشیڈنگ ، سرکاری سکولوں کو درپیش مشکلات اور سوئی گیس کنکشن سمیت آمن و آمان کے صورتحال پر مبنی مسائل کے انبار لگا دئیے ۔کم وولٹیج اور لوڈشیڈنگ کے دورانیہ میں اضافے سے کاروربا ر زندگی مفلوج ہو کر رہ گئی ہے۔ کھلی کچہری کے موقع پر ڈپٹی کمشنر ملاکنڈ شاہد محمود مغل ، اسسٹنٹ کمشنر دگئی عزیز اﷲ جان اور تحصیل ناظم عبد الرشید بھٹو نے عوام کے مسائل سُنے اور انہیں مسائل حل کرنے کی یقین دہانی کرائی اور کہا کہ عوام کے جان و مال کی تحفظ اور ان کے مسائل کے حل کی راہ میں کسی قسم کی رکاوٹ برداشت نہیں کرینگے ۔ اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ملاکنڈ منصور ارشاد ، اے ایس ڈی او درگئی محمد اسحاق ، اے ڈی او ملاکنڈ ذاکر حسین ، محکمہ ایریگیشن کے انجینئر آصف خان ، واپڈا درگئی کے آمیر محمد خان اور ایم ایس درگئی ہسپتال ڈاکٹر کچکول خان سمیت دیگر حکام بھی موجود تھیں جنہوں نے کھلی کچہری کے شرکاء کو مسائل کے حل کا یقین دلایا ۔ اس موقع پر یونین کونسل بدرگہ ، یونین کونسل کوپر ، یونین کونسل ہیروشاہ اور ملحقہ علاقوں سے تعلق رکھنے والے مختلف مکاتب فکر کے لوگوں نے بتایا کہ تحصیل درگئی کے علاقوں بدرگہ ، کوپر ، ہیروشاہ اور سخاکوٹ میں ہیروئن ، آئس نشہ ، چرس اور شراب کی کھلے عام فروخت سے نوجوان نسل تباہی کی طرف جارہی ہے جس سے علاقے میں چوری کے واقعات میں بھی اضافہ ہو رہا ہے جبکہ منشیات فروشوں کو با آثر آفراد کی پشت پناہی حاصل ہے ۔انہوں نے کہا کہ منشیات کے دھندے میں اضافے سے لوگوں کے ذہنوں میں انتظامیہ سے متعلق شکوک و شبہات جنم لے رہے ہیں ۔شرکاء نے بتایا کہ واپڈا درگئی نے ظلم و نا انصافی کی تمام حدیں پار کر دئیے ہیں جس کی وجہ سے لوگوں میں شدید اشتعال اور مایوسی پائی جاتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ واپڈا درگئی صارفین کو میٹر لگانے کے لئے بھی کئی کئی دن دفاتر کی چکریں لگوا رہے ہیں اور صارفین کی جانب سے بروقت بل ادائیگی کے باوجود لوڈشیڈنگ میں روز بہ روز اضافہ ہورہا ہے جبکہ باقی کسر کم وولٹیج اور ٹرانسفارمروں کے بار بار خراب ہونے نے پوری کی ہے ۔ لوگوں نے بتایا کہ گورنمنٹ گرلز سکول آمیر احمد شاہ بانڈہ ، نرو اُبو ہیروشاہ سمیت دیگر سرکاری سکولوں کو درپیش مسائل ، عمارتوں کی خستہ حالی ،طلباء و طالبات کے آمد و رفت کے لئے راستے کے مسئلے سے مکینوں اور طالب علموں کو مشکلات کا سامنا ہے جنہیں فوری طور حل کرنے کی ضرورت ہے ۔ شرکاء نے کہا کہ درگئی ہسپتال میں ایمرجنسی علاج کے لئے جنریٹر بھی موجود نہیں ہے اور ساتھ ساتھ معمولی بیماریوں کے لئے بھی لوگوں کو ادویات باہر سے خریدنے پڑ رہے ہیں جس پر ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر کچکو ل خان نے بتایا کہ ہسپتال کے لئے ایک جنریٹر ایک فلاحی ادارے نے عطیہ کے طوردیا ہے ۔ کھلی کچہری کے شرکاء نے کہا کہ اس سے قبل بھی علاقے میں کھلی کچہریاں ہوتے رہے ہیں لیکن عوام کے مسائل جوں کے توں ہیں اور عوام کو ابھی تک پتہ بھی نہیں چلا کہ ان کے مسائل کے حل کے لئے کیا اقدامات ہوئے ہیں تاہم نئی ضلعی انتظامیہ اور تحصیل انتظامیہ سے پُر اُمید ہیں کہ مسائل کے حل کے لئے سنجیدگی سے کام کرینگے ۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر ملاکنڈ شاہد محمود مغل ، اسسٹنٹ کمشنر درگئی عزیز اﷲ جان اور تحصیل ناظم درگئی عبد الرشید بھٹو نے شرکاء کو یقین دلایا کہ ہم عوام کے خادم ہیں اور انشاء اﷲ ان کے مسائل کے حل اور مشکلات کے خاتمے کے لئے عملی اور ترجیحی بنیادوں پر کام کرینگے ۔ ڈی سی ملاکنڈ شاہد محمود مغل نے کہا کہ عوام کے جان و مال کی حفاظت حکومت اور انتظامیہ کی اولین ذمہ داری اور ترجیح ہے جس میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کرینگے اور جو اہلکار بھی ڈیوٹی میں غفلت اور عوام کے جان ومال کی حفاظت میں ٹال مٹول سے کام لیں گے انہیں گھر بھیجا جائیگا ۔ ڈی سی ملاکنڈ نے کہا کہ جو مسائل ضلعی سطع پر حل کرنے کے قابل ہیں انہیں ضلعی سطع پر حل کرینگے اور جو مسائل صوبائی اور مرکزی لیول کے ہیں انہیں صوبائی اور مرکزی حکام کے نوٹس میں لائینگے ۔ انہوں نے کہا کہ عوام جرائم و مسائل کے خاتمے میں انتظامیہ کی رہنمائی کریں اورغیر قانونی اقدامات کی بر وقت نشاندہی کرکے محب وطن شہری ہونے کا ثبوت دیں ۔ اس موقع پر متعدد شرکاء نے مختلف مسائل میں ضلعی انتظامیہ سے تعاون کرنے کی آپیل کی اور کہا کہ ہمیں انصاف فراہم کرکے ہمارے مسائل فوری طور پر حل کئے جائیں ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -