ڈاکٹرز سٹاف کی مبینہ غفلت سے نومولود بچی جاں بحق ، ورثا کا شدید احتجاج

ڈاکٹرز سٹاف کی مبینہ غفلت سے نومولود بچی جاں بحق ، ورثا کا شدید احتجاج

  

خانیوال(نما ئندہ پاکستان،نامہ نگار)ڈا کٹروں اور پیرا میڈیکل سٹاف کی مبینہ غفلت سے نو مو لو د بچی چل بسی‘ ورثانے شدید احتجا ج کیا ہے۔ تفصیل کے مطا بق پرا نا کا ر خا نہ خا نیوال کا رہا ئشی ملک رحمت علی ولد قطب دین اپنی نو مو لود نو اسی کی طبیعت خرا ب ہو نے پر اسے ایمر جنسی وارڈ ڈسٹرکٹ (بقیہ نمبر39صفحہ12پر )

ہسپتال خا نیوال لیکرآیا جہا ں ڈا کٹر سہیل احمد نے بچی کا معا ئنہ کراس کی کو میڈیسن دی اور نر سری وارڈ میں منتقل کر دیا جہا پر اسکی پیرا میڈیکل سٹا ف نے کو ئی دیکھ بھا ل نہیں کی اور نا ہی اس کی کو ئی علاج کیا گیا جبکہ ہم ڈا کٹر سہیل احمد اور پیرا میڈیکل سٹا ف کو با ر با ر کہتے رہے مگر انہو ں نے کو ئی تو جہ نہ دی اور نہ ہی ما ں کو دودھ پلا نے دیا گیا ڈا کٹر سہیل احمداور پیرا میڈیکل سٹاف کی مبینہ مجرما نہ غفلت کی وجہ سے میری نو مو لو د نواسی اللہ کو پیا ری ہو گئی بچی کی میت گھر پہنچنے پر کہرام برپا ہو گیا۔اہل محلہ اورورثا نے ڈا کٹر اورپیرا میڈیکل سٹاف مجرما نہ غفلت پرشدید احتجا ج کر تے ہوئے وزیر اعلی پنجاب سیکرٹری ہیلتھ پنجاب ڈی سی خا نیوال سمیت اربا ب اختیا ر سے نو ٹس لیکرسخت کا روائی کا مطا لبہ کیا ۔ڈاکٹر سہیل احمد نے ورثا کے الزامات کی ترید کرتے ہوئے کہا ہے کہ بچی کو تشویشناک حالت میں لایا گیا جہاں ایمرجنسی میں رکھنے کے بعد طبعیت بہتر ہونے پر اسے بچوں کے وارڈ میں شفٹ کیا گیا اور اس کا 12گھنٹے علاج کیا گیااور اس کی جان بچانے کی کوشش کی گئی تاہم وہ جانبر نہ ہوسکی۔اس واقعہ میں ڈاکٹر یا سٹاف نے کوئی غفلت نہیں کی۔

سٹاف کی غفلت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -