14ستمبرکوعوام بڑی تعدادمیں ناموس رسالت مارچ میں شریک ہونگے،شمس سواتی

14ستمبرکوعوام بڑی تعدادمیں ناموس رسالت مارچ میں شریک ہونگے،شمس سواتی

  

راولپنڈی (سٹی رپورٹر) جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی رکن شوری وامیرضلع راولپنڈی شمس الرحمن سواتی نے کہاہے کہ 14ستمبرکوخطہ پوٹھوہارسے بڑی تعداد میں عاشقان مصطفے ﷺتحفظ ناموس رسالت مارچ میں شریک ہوں گے عوام اورکارکنان اس دن جمعتہ المبارک کی نمازکے بعد درودشریف پڑھتے ہوئے جوق درجوق لیاقت باغ پہنچیں جہاں سے امیرجماعت اسلامی سینیٹرسراج الحق کی قیادت میں مارچ اسلام آباد کیلئے روانہ ہوگا ۔ تحفظ ناموس رسالت ﷺمارچ کے سلسلے میں زونل ذمہ داران کے پلاننگ اجلاس اورکارکنان کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے رہنماجماعت اسلامی نے اپیل کی کہ آج کے خطبات جمعہ میں مساجد اور امام بارگاہوں میں خطیب و آئمہ حضرات ختم نبوت اور شان رسالت ؐ کے موضوعات پر خطاب کریں ۔ انھوں نے کہاکہ ڈیڑھ ارب مسلمانوں کے جذبات مجروع کرکے دنیا میں ایک نئی نظریاتی جنگ کاآغازکردیا گیاہے،بچیوں کے اسکارف سے خوفزدہ عالمی طاغوت اوریورپ بدترین پستی کاشکارہے ۔محمدعربی ﷺصرف مسلمانوں ہی نہیں بلکہ پوری انسانیت کیلئے رحمت تھے مسلمان نبی مہربانﷺ کی ناموس پرکسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے ہم تمام مذاہب ، الہامی کتابوں،انبیاء اورمذہبی پیشواؤں کا احترام کرتے ہیں لیکن مٹھی بھرشیطان دنیاکے امن کوتباہ کرنے کے ایجنڈے پرہیں انھوں نے کہاکہعالم اسلام کو متحد ہو کر ہالینڈ میں توہین آمیز خاکوں کی اشاعت کو روکنے کے لیے مشترکہ لائحہ عمل دینا چاہیے،پاکستانی حکومت باتوں اور مطالبات سے آگے بڑھ کر عملی اقدامات کرے ، نیدر لینڈ اور ہالینڈ سے اپنے سفیر وں کو واپس بلائے اور ان کے سفیروں کو ملک بدر کیا جائے ۔ ان ممالک کے ساتھ اس وقت تک سفارتی اور تجارتی تعلقات منقطع رکھے جائیں ، جب تک وہ اپنے شہریوں کو اس قبیح حرکت سے روک نہیں دیتے ۔انھوں نے کہاکہ خاتم النبیین حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی ناموس کے تحفظ کے لیے پوری امت کو اٹھ کھڑنا ہوناچاہیے خاص طور پر عالم اسلام کے حکمرانوں کو توہین آمیز خاکوں کو روکنے کے لیے آخری حد تک جانا چاہیے اور اقوام متحدہ اور ان بدبخت ممالک کو واضح پیغام دیا جائے جو خاتم النبیینؐ کے خاکے بنانے کے مقابلے کروا رہے ہیں ۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -