پاکستانی ماہرین بھارت کی کس چیز کا معائنہ کرنے وہاں جائیں گے؟ فیصلہ ہو گیا، سب سے بڑی خبر آ گئی

پاکستانی ماہرین بھارت کی کس چیز کا معائنہ کرنے وہاں جائیں گے؟ فیصلہ ہو گیا، ...
پاکستانی ماہرین بھارت کی کس چیز کا معائنہ کرنے وہاں جائیں گے؟ فیصلہ ہو گیا، سب سے بڑی خبر آ گئی

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان اور بھارت کے مابین آبی تنازع پر گزشتہ دنوں مذاکرات ہوئے جس میں بھارت نے پاکستانی ماہرین کے بھارت جانے اور دو ہائیڈروپاور پراجیکٹس کا معائنہ کرنے پر رضامندی ظاہر کر دی ہے۔ ڈیلی ڈان کے مطابق پاکستانی ماہرین آئندہ ماہ کے آخر میں بھارت کے پکل دل اور لوئر کلنال پراجیکٹس کا معائنہ کرنے جائیں گے جو بالترتیب 1ہزار میگا واٹ اور48میگاواٹ بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں اور یہ پراجیکٹس سندھ طاس معاہدے کے تحت پاکستان کے حصے میں آنے والے دریائے چناب پر بنائے گئے ہیں۔

بھارتی وفد نے پاکستانی مذاکرات کار ٹیم کو یہ یقین دہانی بھی کروائی کے ان پراجیکٹس پر پاکستان کے تحفظات کو سنجیدگی سے لیا جائے گا اور انہیں دور کرنے کی کوشش کی جائے گی۔ اس حوالے سے آئندہ میٹنگ جو نئی دہلی میں ہو گی، اس میں بھی پاکستان کے تحفظات پر بات ہو گی۔ واٹر ریسورس سیکرٹری شامیل احمد خواجہ نے ڈیلی ڈان سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ’’بھارت کے ساتھ لاہور میں ہونے والے مذاکرات میں بھارت کا پاکستانی ماہرین کو اپنے ہاں جانے اور اپنے پاور پراجیکٹس کا معائنہ کرنے کی اجازت دینا بڑا بریک تھرو ہے۔ ہمارے ماہرین کی ٹیم آئندہ ماہ کے آخر تک بھارت کا دورہ کرے گی اور ان دونوں پراجیکٹس کا تفصیلی معائنہ کرے گی۔ ہم انڈس واٹر معاہدے کے مطابق اپنے دریاؤں کی روانی میں کوئی خلل نہیں دیکھنا چاہتے، اور بھارت سے اپنا موقف منوانا ہماری کامیابی ہے۔‘‘

مزید :

بین الاقوامی -علاقائی -پنجاب -لاہور -