موجودہ حکومت ہر سطح پر ناکام ہوچکی ،خواجہ محمد ہوتی   

  موجودہ حکومت ہر سطح پر ناکام ہوچکی ،خواجہ محمد ہوتی   

  

مردان (بیورورپورٹ) پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنماا ورسابق وفاقی وزیرنوابزادہ خواجہ محمدخان ہوتی نے قومی حکومت کے قیام کا مطالبہ کرتے ہوئے کہاہے کہ موجودہ حکومت ہر سطح پر ناکام ہوچکی ہے ،خارجہ محاذ پر ملک تنہائی کا شکارہے ،پارلیمنٹ کو تماشہ بنادیاگیاہے ،کشمیر ایشو پر قوم ایک ہے ،آصف زرداری کی صحت کا معاملہ سنجیدہ ہے اگر انہیں کچھ ہوگیا توحکومت ذمہ دار ہوگی وہ مردان پریس کلب میں ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے اس موقع پر پارٹی رہنما رحم بادشاہ شیرپاو¿ اور انورخان بھی موجود تھے خواجہ محمد خان ہوتی نے کہاکہ دوبارہ انتخابات مسائل کا حل نہیں اس وقت ملک کا سب سے بڑا مسئلہ اقتصادیات ہیں معاشی استحکام کے ون پوائنٹ ایجنڈے پر4سال کے لئے قومی حکومت تشکیل دیاجائے موجودہ حکومت سے معاملات سنبھالے نہیں جارہے آج غریب لوگوں کے پاس دووقت روٹی کی کے لئے وسائل نہیں سابقہ حکمرانوں نے دس سال میں 24ہزار ارب قرضہ لیاتھا جبکہ کپتان کی حکومت نے ایک سال میں 14ہزار ارب قرضہ حاصل کرکے ریکارڈ قائم کرلیا خواجہ محمد خان ہوتی نے کہاکہ تحریک انصاف کی حکومت نے پارلیمنٹ کو تماشہ بنارکھاہے کشمیر ایشو پر بلائے گئے اجلاس میں ورزاءنے اپوزیشن کا کردار اداکیا انہوںنے کہاکہ کشمیر پرپوری قوم ایک ہے او رمودی سرکارکی جارحیت کے خلاف ڈٹ کر میدان میں لڑنے کو تیارہیں تاہم حکومت ناقص خارجہ پالیسی کے باعث بین الاقوامی طورپر تنہائی کا شکارہے ذوالفقارعلی بھٹو کے دورمیں مسلم امہ وجودمیں آیا تھا لیکن آج وہی عرب ممالک مودی کو اعلیٰ ترین ایوارڈ ز سے نوازنے لگے ہیں انہوںنے کہاکہ دورہ امریکہ کے دوران صدر ٹرمپ نے کپ اپنا پاس رکھا اور پیندہ وزیراعظم کو تھمادیا جس پر عمران خان نے وطن پہنچ کر جشن منایاانہوںنے کہاکہ عمران خان اچھے کھلاڑی ہوسکتے ہیں لیکن اچھے سیاستدان نہیں ہیں خواجہ محمد خان ہوتی نے سابق صدر آصف علی زرداری کے حوالے سے کہاکہ سابق صدر کی صحت کو شدیدخطرات لاحق ہیں اور اگر انہیں کچھ ہوگیا تو حکومت ذمہ دار ہوگی پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما نے کہاکہ موجودہ حکمرانوں نے سیاسی انتقامی کاروائی میں اندھے ہوچکے ہیں خواتین تک کو جیلوں میں ڈالا گیا سیاسی مخالفین پر نشانے پر ہیں لیکن نیب اور احتساب والوں کو بی آرٹی ،ملم جبہ اور بائیومیٹرک سمیت بلین ٹری سونامی نظر نہیں آرہی خواجہ محمد خان ہوتی نے کہاکہ وزیراعظم نے ایک سال میں 2940یوٹرن لئے ہیں اداروں میں سنسر شپ کی پالیسی نیک شگون نہیں حکومت جتنے بھی سخت قوانین بنائے گی ہم اتنے ہی شدت کے ساتھ عوامی حقوق کے لئے میدان میں نکلیں گے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -