مسئلہ کشمیر کب تک حل نہیں ہوگا ؟ سابق نگران وزیر اعلیٰ پنجاب نے بتادیا

مسئلہ کشمیر کب تک حل نہیں ہوگا ؟ سابق نگران وزیر اعلیٰ پنجاب نے بتادیا
 مسئلہ کشمیر کب تک حل نہیں ہوگا ؟ سابق نگران وزیر اعلیٰ پنجاب نے بتادیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق نگران وزیر اعلیٰ پنجاب حسن عسکری نے کہاہے کہ اگر حکومت اپنی سمت نہیں بناتی اور اپوزیشن کی جانب سے حکومت کیساتھ مکمل تعاون نہیں کیا جاتا ، اس وقت تک کشمیر کا مسئلہ حل نہیں ہوسکتا ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”تھنک ٹینک“میں گفتگو کرتے ہوئے حسن عسکری نے کہا کہ ایک دفعہ جب ایک بندہ نیب کے ہتھے چڑھ جائے تو اس کو وہاں سے نکلنا آسان نہیں ہوتا ۔ انہوں نے کہا کہ نیب کے طریقہ کار میں تبدیلی کی ضرورت ہے ۔ نیب والے نوے دن کیلئے بندے کو پکڑ لیتے ہیں اور پھر اس کی نوے دن تک ضمانت نہیں ہوتی ، تفتیشی افسر اپنی ایک طاقت قائم کئے ہوئے ہیں ۔ وہ بندے کو پکڑ لیتے ہیں اور شواہد ان کے پاس نہیں ہوتے ۔ وہ بندے کو پکڑ کر حیران و پریشان کرکے پلی بارگین کی طرف لاناچاہتے ہیں۔

حسن عسکری کا کہنا تھا کہ اس وقت پتہ نہیں چل رہا کہ حکومت کس طرف جانا چا رہی ہے؟وزراءاپنی مرضی سے بیان دیتے رہتے ہیں ، حکومت کی ایک سمت ہونی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر حکومت اپنی سمت نہیں بناتی اور اپوزیشن کی جانب سے حکومت کے ساتھ مکمل تعاون نہیں کیا جاتا ، اس وقت تک کشمیر کا مسئلہ حل نہیں ہوسکتا ۔

مزید :

قومی -