اُداس شامیں، اُجاڑ رستے کبھی بلائیں تو لوٹ آنا

اُداس شامیں، اُجاڑ رستے کبھی بلائیں تو لوٹ آنا
اُداس شامیں، اُجاڑ رستے کبھی بلائیں تو لوٹ آنا

  

اُداس شامیں، اُجاڑ رستے کبھی بلائیں تو لوٹ آنا

کسی کی آنکھوں میں رتجگوں کے عذاب آئیں تو لوٹ آنا

ابھی نئی وادیوں، نئے منظروں میں رہ لو مگر میری جاں

یہ سارے اک ایک کر کے جب تم کو چھوڑ جائیں تو لوٹ آنا

جو شام ڈھلتے ہی اپنی اپنی پناہ گاہوں کو لوٹتے ہیں

اگر وہ پنچھی کبھی کوئی داستاں سنائیں تو لوٹ آنا

نئے زمانوں کا کرب اوڑھے ضعیف لمحے نڈھال یادیں

تمھارے خوابوں کے بند کمروں میں لوٹ آئیں تو لوٹ آنا

میں روز یونہی ہوا پہ لکھ لکھ کے اس کی جانب یہ بھیجتا ہوں

کہ اچھے موسم اگر پہاڑوں پہ مسکرائیں تو لوٹ آنا

اگر اندھیروں میں چھوڑ کر تم کو بھول جائیں تمھارے ساتھی

اور اپنی خاطر ہی اپنے اپنے دیے جلائیں تو لوٹ آنا

فرحت عباس شاہ

                                       Udaas Shaamen , Ujaarr Rastay Kabhi Bulaaen To Laot Aana

                                           Kisi Ki Aankhon Men Ratjagon K Azaab aaen To Laot Aana

                    Abhi Nai Waadion , Naey Manzaron Men Reh Lo Magar Miri Jaan

                                Yeh Saaray Ik Aik Kar K Jab Tum Ko Chorr Jaaen To Laot Aana

                                      Jo Shaam Dhaltay Hi Apni Apni PnahGaahon Ko Laottay Hen

                                        Agar Wo Panchi Kabhi Koi Daastaan Sunaanen To Laot Aana

                             Naey Zamaano K Karb Aorrhay Zaeef Lamhay ,Nidhaal Yaaden

                         Tumhaaray Khaabon K Band kamronMen Laot Aaen o Laot Aana

          Main Roz Yunhi Hawa Pe Likh Likh K Uss Ki  Jaanib Yeh Bhaijta Hun

                     Keh Achay Maosam Agar Pahaarron Pe Muskaraaen To Laot Aana

Agar Andhairon Men Chorr Kar Tum Ko Bhool Jaaen Tumhaaray Saathi

                                         Aor Apni Khaatir Hi Apnay Apnay Diay Jalaaen To Laot Aana

                                                                                                                                                                                                              Farhat Abbas Shah

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -